سعودی عرب کے خائن اور غدار بادشاہ کو ایران کے خلاف الزامات عائد کرنے کا کوئی حق نہیں

اسلامی جمہوریہ ایران کی پارلیمنٹ کے اسپیکر کے بین الاقوامی امور کے مشیر حسین امیر عبداللہیان نے سعودی عرب کے خائن اور غدار بادشاہ ،شاہ سلمان کی ایران کے خلاف ہرزہ سرائی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی عرب کے بادشاہ شاہ سلمان کو ایران کے خلاف الزامات عائد کرنے کا کوئی حق نہیں ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کی پارلیمنٹ کے اسپیکر کے بین الاقوامی امور کے مشیر حسین امیر عبداللہیان نے سعودی عرب کے خائن اور غدار بادشاہ کی ایران کے خلاف ہرزہ سرائی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی عرب کے بادشاہ شاہ سلمان کو ایران کے خلاف الزامات عائد کرنے کا کوئی حق نہیں ہے۔ انھوں نے کہا کہ سعودی عرب امریکہ اور اسرائیل کے ساتھ ملکر اسلامی ممالک میں عدم استحکام پیدا کررہا ہے اور سامراجی طاقتوں کے ساتھ ملکر یمن کے نہتے عربوں کا ناحق خون بہا رہا ہے۔ امیر عبداللہیان نے کہا کہ عراق ، شام، لبنان اور یمن میں سعودی عرب نے دہشت گردوں کی بھر پور مدد کی اور دہشت گردوں کے حوصلے بلند کرنے کے سلسلے میں خدا سے بے خبـر سعودی مفتیوں کے فتوے آج بھی تاریخ میں موجود ہیں۔ انھوں نے کہا کہ سعودی عرب کو امریکہ اور اسرائیل کی خدمت کرنے کے بجائے اپنے ہمسایہ ممالک کا احترام کرنا چاہیے۔ انھوں نے کہا کہ ایران خطے میں پائدار امن کا خواہاں ہے۔ واضح رہے کہ سعودی عرب کے بادشاہ نے خطے میں ایران کی امن و صلح کی کوششوں پر تنقید کرتے ہوئے کہا تھا کہ اسرائيل خطے کے لئے خطرہ نہیں بلکہ ایران خطرہ ہے۔ مبصرین کا کہنا ہے سعودی عرب کے غدار اور خائن بادشاہ درحقیقت امریکہ اور اسرائیل کے ترجمان ہیں اور ایران کے خلاف ویسی ہی ہرزہ سرائی  اور گمراہ کن باتیں کررہے ہیں جیسی امریکی اور اسرائیلی حکام کرتے ہیں۔

News Code 1903897

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 9 =