امریکہ کا پاکستان اور بھارت کے درمیان براہ راست مذاکرات پر زور

امریکہ نے مسلمان تنظیم کے ایک گروہ کو بتایا ہے کہ وہ بھارت اور پاکستان کے درمیان کشمیر سمیت دیگر امور پر براہ راست مذاکرات کی حمایت کرتے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ڈان کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکہ نے مسلمان تنظیم کے ایک گروہ کو بتایا ہے کہ وہ بھارت اور پاکستان کے درمیان کشمیر سمیت دیگر امور پر براہ راست مذاکرات کی حمایت کرتے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق امریکی کونسل آف مسلم آرگنائزیشن (یو ایس سی ایم او) کے وفد نے امریکی اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ کے ڈپٹی اسسٹنٹ سیکریٹری برائے امور پاکستان ارون مسنگا سے رواں ہفتے واشنگٹن میں ملاقات کی اور انہیں بھارت کے 5 اگست کے فیصلے پر کشمیر میں پیدا ہونے والی صورتحال پر اپنی تشویش کا اظہار کیا۔

انہوں نے امریکہ سے جنوبی ایشیا میں 2 جوہری ریاستوں کے درمیان کشیدگی کو کم کرنے کے لیے اپنا کردار ادا کرنے کے لیے بھی زور دیا۔ جمعے کے روز جاری ہونے والی ٹویٹ میں امریکہ کے نگراں اسسٹنٹ سیکریٹری آف اسٹیٹ الیس جی ویلز کا کہنا تھا کہ ارون مسنگا نے مسلمانوں کے وفد کوامریکہ کا موقف بتایا اور کہا کہ واشنگٹن پاکستان اور بھارت کے درمیان مسئلے کا پر امن حل نکالنے پر زور دیتا رہے گا۔

پاکستان اور بھارت کے درمیان تعلقات 5 اگست کے بعد خراب ہوئے جب نریندر مودی کی حکومت نے جموں و کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کردی تھی۔

News Code 1893593

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 1 =