امریکہ میں ڈیموکریٹس کی ٹرمپ پوتن خفیہ ملاقاتوں پر شدید تنقید

امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو روسی صدر پوتن سے خفیہ ملاقاتوں پر سخت ردعمل کا سامنا ہے اور ڈیموکریٹ ارکان نے اس معاملے پر سخت سوالات اٹھائے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکہ کے صدر ڈونلڈ ٹرمپ کو روسی صدر پوتن سے خفیہ ملاقاتوں پر سخت ردعمل کا سامنا ہے اور ڈیموکریٹ ارکان نے اس معاملے پر سخت سوالات اٹھائے ہیں۔

اپوزیشن جماعت ڈیموکریٹ کے اہم رکن سینیٹر ڈک ڈربن نے کہا کہ ملاقاتوں کے بارے میں بہت سے سوالات موجود ہیں، ٹرمپ کے جی بی کے ایک سابق ایجنٹ سے اس قدر میل جول رکھتے ہی کیوں ہیں؟ وہ کیوں پوتن کے بہترین دوست ہیں؟

میری لینڈ سے تعلق رکھنے والے ڈیموکریٹ سینیٹر ’’جان ڈیلےنے‘‘ کہا کہ روس سے ٹرمپ کے تعلقات انتہائی مشکوک ہیں، ہم نے عرصے سے کوئی ایسا صدر نہیں دیکھا جو پوتن کا ایسا حامی ہو۔

سینیٹ کی انٹیلی جنس کمیٹی کے سربراہ ایڈم شف نے کہا کہ کیا ہمیں نہیں دیکھنا چاہیے کہ ہمارے صدر کے لیے ’’سب سے پہلے امریکہ‘‘ ہے۔

ریپبلیکن سینیٹرلنزے گراہم کا کہنا ہے کہ وہ واشنگٹن پوسٹ کی خبر پر یقین نہیں رکھتے لیکن اگر ملاقاتیں ہوئی ہیں تو کانگریس کو ان کا پتا ہونا چاہیے، سینیٹر ٹیڈ کروز نے کہا کہ وہ اخبار میں شائع ہونے والے الزام سے زیادہ معلومات جاننے کے خواہش مند ہیں۔

واضح رہے کہ واشنگٹن پوسٹ نے اپنی رپورٹ میں انکشاف کیا تھا کہ گزشتہ دو برس کے دوران امریکہ اور روسی صدر کی 5 طویل ملاقاتیں ہوئیں جن میں سے کسی کی تفصیلات پیش نہیں کی گئیں جس پر صدر ٹرمپ نے اس اسٹوری کو مضحکہ خیز تو قرار دیا مگر اس کی تردید نہیں کی۔

News Code 1887287

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 2 =