اسرائیلی فوج نے شہید فلسطینی کا گھر مسمار کردیا

مقبوضہ فلسطین میں اسرائیلی فوج نے شہید فلسطینی نوجوان کے گھر کو بلڈوزر سے مسمار کر کے اہل خانہ کو دربدر کر دیا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے فلسطین الیوم کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ مقبوضہ فلسطین میں اسرائیلی فوج نے شہید فلسطینی نوجوان کے گھر کو بلڈوزر سے مسمار کر کے اہل خانہ کو دربدر کر دیا۔ اطلاعات کے مطابق اسرائیلی فوج نے ظلم کی انتہا کرتے ہوئے رملہ کے شمالی گاؤں میں ایک شہید فلسطینی کے گھر کو مسمار کر کے اہل خانہ کو دربدر ہونے پر مجبور کر دیا ہے۔ اسرائیلی فوج نے اس گھر کے ایک رہائشی 17 سالہ نوجوان محمد طارق ابراہیم کو رواں برس جولائی میں شہید کردیا تھا۔

اسرائیل کے حکام کی جانب سے ایک ویڈیو بھی جاری کی گئی ہے جس میں دیکھا جا سکتا ہے کہ اسرائیلی فوج بلڈوزر کے ذریعے ایک منزلہ عمارت کو مکمل طور پر مسمار کر رہی ہے۔  عرب ذرائع کے مطابق فلسطینیوں پر ہونے والے مظالم پر سعودی عرب اور اس کے اتحادی عرب ممالک خاموش تماشائي بنے ہوئے ہیں۔

News Code 1883457

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 4 =