عراق پر امریکہ کی فوجی یلغار دہشت گردی کا آشکارا مصداق ہے

اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان نے عراقی سرزمین اور عراقی رضاکار فورس پر امریکی حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ عراق پر امریکہ کی فوجی یلغار دہشت گردی کا آشکارا مصداق ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ کے ترجمان سید عباس موسوی نے عراقی سرزمین اور عراقی رضاکار فورس " حشد الشعبی " پر امریکی حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ عراق پر امریکہ کی فوجی یلغار دہشت گردی کا آشکارا مصداق ہے۔ ایرانی وزارت خارجہ کے ترجمان نے کہا کہ امریکہ کو عراق کے استقلال اور عراقی حاکمیت کا احترام کرنا چاہیے اور عراق کے اندرونی معاملات میں مداخلت سے دور رہنا چاہیے۔

سید عباس موسوی نے دہشت گردی کے خلاف جنگ کے امریکی دعوے کو جھوٹ پر مبنی قراردیتے ہوئے کہا کہ امریکی جھوٹ کی قلعی اس بات سے کھل جاتی ہے کہ امریکہ اس فورس کو نشانہ بنارہا ہے جس نے عراق سے داعش کے خاتمہ میں اہم کردار ادا کیا۔ انھوں نے کہا کہ دنیا جانتی ہے کہ امریکہ نے داعش کو عراق اور شام کو نابود کرنے کے لئے تشکیل دیا تھا اور اس نے داعش کے ذریعہ کچھ اہداف حاصل بھی کرلئے لیکن وہ شام اور عراق کی حکومتوں کو ختم کرنے میں  بری طرح ناکام رہا ۔ ایرانی وزارت خارجہ کے ترجما ن نے عراق پر امریکی فوجی یلغار اور حشد الشعبی پر امریکی حملے کی مذمت کرتے ہوئے اسے دہشت گردی کا آشکارا مصداق قراردیا۔

News Code 1896618

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 9 + 2 =