خطیب جمعہ کی تیل کی درآمدات سے بجٹ کی وابستگی کو کم کرنے پرتاکید

اسلامی جمہوریہ ایران کے دارالحکومت تہران میں نماز جمعہ کے خطیب نے ایرانی حکومت اور پارلیمنٹ پر زوردیا ہے کہ وہ تیل کی درآمدات سے بجٹ کی وابستگی کو کم کرنے پر توجہ مبذول کریں ۔

مہر خبررساں ایجنسی کے نامہ نگار کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے دارالحکومت تہران میں نماز حجۃ الاسلام والمسلمین محمد حسن ابو ترابی فرد کی امامت میں منعقد ہوئی ، جس میں لاکھوں مؤمنین نے شرکت کی،  خطیب جمعہ  نے نماز جمعہ کے خطبوں نے ایرانی حکومت اور پارلیمنٹ پر زوردیا ہے کہ وہ تیل کی درآمدات سے بجٹ کی وابستگی کو کم کرنے پر توجہ مبذول کریں ۔

خطیب جمعہ نے کہا کہ رہبر معظم انقلاب اسلامی نے فعال جوانوں کو ذمہ داریاں  اور اختیارات سپرد کرنے ، ان کی نگرانی اور ہدایت کرنے کی سفارش کی ہے۔ حکومت کو رہبر معظم انقلاب اسلامی کی ہدایات پر بھی عمل کرنا چاہیے۔

انھوں نے کہا کہ مصر کے بادشاہ نے حضرت یوسف علیہ السلام کے حوالے اقتصادی امور کی ذمہ د اری سپرد کی ۔ جس سے اقتصاد کی اہمیت کا پتہ چلتا ہے۔ خطیب جمعہ نے کہا کہ حضرت یوسف علیہ السلام نے مصری اقتصاد کا نقشہ راہ آمادہ کیا اور اس کے مطابق عمل کرکے مصری اقتصاد کو تحفظ فراہم کیا۔ خطیب جمعہ نے اقتصادی ماہرین پر زوردیا کہ وہ ملک کے اقتصاد کو مضـوط بنانے کے لئے نقشہ راہ تیار کریں اور اس کے مطابق عمل کریں۔

خطیب جمعہ نے کہا کہ ایران کے خلاف 4 دہائیوں سے اقتصادی پابندیاں عائد ہیں لیکن اس کے باوجود اقتصاد کے شعبہ میں نمایاں کام انجام دیئے گئے ہیں۔ خطیب جمعہ نے کہا کہ ایرانی قوم بہترین اور فعال قوم ہے اور ایران کو اللہ تعالی نے حکیم ، شجاع اور دانا رہبر بھی عطا کیا ہے ، ایران پیشرفت اور ترقی کی سمت گامزن ہے۔ انقلاب اسلامی اور ایرانی قوم کی قربانیوں کے نتیجے میں علاقائی اور عالمی سطح پر امریکہ کا نفوذ کم ہوگیا ہے اور آج عالمی سطح پر ایران کے بجائے امریکہ کو تنہائی کا سامنا ہے۔

News Code 1890600

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 13 =