غزہ میں اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے دو فلسطینی نوجوان شہید

غزہ میں اسرائیلی حدود کے قریب اسنائپرز کی فائرنگ سے 14 اور 18 سال کے دو فلسطینی نوجوان شہید جب کہ 7 افراد زخمی ہوگئے۔

مہر خبررساں یجنسی نے عرب ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ غزہ میں اسرائیلی حدود کے قریب اسنائپرز کی فائرنگ سے 14 اور 18 سال کے دو نوعمر فلسطینی شہید جب کہ 7 افراد زخمی ہوگئے۔

14 سالہ حسن شیلابی کو حماس کے مرکزی رہنما اسماعیل ہانیہ کا قریبی رشتے دار بتایا جارہا ہے۔ یہ واقعہ اس وقت پیش آیا ہے کہ جب غزہ میں عوامی احتجاج مسلسل 46 ویں روز میں داخل ہوچکا ہے۔ مظاہرین اسرائیلی مظالم سے تنگ آ کر ہر روز غزہ اور اسرائیلی حدود کے درمیان احتجاج کرتے ہیں۔ اس کے ردِ عمل میں دور موجود اسرائیلی فوج کے نشانہ باز انہیں نشانہ بناتے ہیں۔ واضح رہے کہ اسرائیلی فوجی اب تک کئی صحافیوں اور ڈاکٹروں کو بھی گولی کا نشانہ بناچکے ہیں۔ جمعے کے روز احتجاج میں شدت آگئی اور لگ بھگ 7 ہزار فلسطینی نوجوانوں نے احتجاجی مظاہروں میں حصہ لیا جو سرحد کے علاوہ غزہ کے کئی مقامات پر جاری رہا۔ آزاد فلسطینی ذرائع کے مطابق آج تین نوجوانوں کو شہید کیا گیا ہے۔

News Code 1887976

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 7 =