سعودی عرب کے خونخوار بادشاہ کا ایران کے پرامن ایٹمی پروگرام کو روکنے کا مطالبہ

سعودی عرب کے امریکہ اور اسرائیل نواز ظالم و خونخوار بادشاہ شاہ سلمان نے ایران کے خلاف ہرزہ سرائی کرتے ہوئے کہا ہے کہ عالمی برادری کو ایران کے پرامن ایٹمی پروگرام کو روکنے کی کوشش کرنی چاہیے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے الجزیرہ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ سعودی عرب کے امریکہ اور اسرائیل نواز ظالم و خونخوار بادشاہ شاہ سلمان نے ایران کے خلاف ہرزہ سرائی کرتے ہوئے کہا ہے کہ عالمی برادری کو ایران کے پرامن ایٹمی پروگرام کو روکنے کی کوشش کرنی چاہیے۔ سعودی عرب کے بادشاہ نے کہا کہ ہم علاقائی مسائل کو حل کرنے کی کوششیں جاری رکھیں گے۔ اس نے کہا کہ ہم شام کے مسئلہ کو سیاسی مذاکرات کے ذریعہ حل کرنے کے خواہاں ہیں۔

سعودی عرب کے خونخوار بادشاہ نے یمن پر سعودی عرب کی مسلط کردہ جنگ کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ہم یمن کا بحران بھی سیاسی طریقہ سے حل کرنا چاہتے ہیں۔ سعودی عرب کے بادشاہ نے دہشت گردوں کی حمایت ، یمن اور قطر کے خلاف اپنے خوفناک اور ناپاک جنگی عزائم کو چھپاتے ہوئے کہا کہ ہم عالمی برادری سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ ایران کے پرامن ایٹمی پروگرام کو متوقف کرنے کی کوشش کرے۔ بہر حال سعودی عرب کے خونخوار اور ظالم بادشاہ نے اسرائیل کے ایٹمی ہتھیاروں کے بارے میں نہ کچھ کہا اور نہ ہی فلسطینیوں پر اسرائیلی جرائم کے بارے میں کوئی بات کی۔

News Code 1885768

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 1 =