ملائیشیا کے سابق وزیراعظم کی اہلیہ پرکرپشن کیس میں  فرد جرم عائد

ملائیشیا کے سابق وزیراعظم نجیب رزاق کی اہلیہ روسماہ منصور پر کرپشن کے دو مختلف مقدمات میں 46 ارب روپے کی بدعنوانی اور رشوت کے الزام میں فرد جرم عائد کردی گئی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ملائیشیا کے سابق وزیراعظم نجیب رزاق کی اہلیہ روسماہ منصور پر کرپشن کے دو مختلف مقدمات میں 46 ارب روپے کی بدعنوانی اور رشوت  کے الزام میں فرد جرم عائد کردی گئی ہے۔ ملائیشیا کے پراسیکیوٹرز نے الزام عائد کیا کہ روسماہ منصور نے ترقیاتی منصوبوں میں نجی کمپنی سے 6 ارب روپے بطور رشوت وصول کیے۔ پراسیکیوٹرز کا کہنا تھا کہ ریاست کے مشرقی حصے میں اسکولوں کے لیے سولر منصوبوں میں 40 ارب روپے کا غبن کیا گیا۔  واضح رہے کہ رواں برس اکتوبر میں روسماہ منصور پر منی لانڈرنگ سمیت بدعنوانی کے 17 الزامات عائد کیے گئے تاہم انہوں نے تمام الزامات کو مسترد کردیا تھا۔

خیال رہے کہ سابق وزیراعظم نجیب رزاق کو بھی 4 اکتوبر کو ملائیشیا کی ایک علیحدہ عدالت میں بد عنوانی اور منی لانڈنگ کے دو درجن سے زائد الزامات کے لیے پیش کیا گیا تھا۔

News Code 1885664

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 9 =