افغانستان میں امریکہ کی موجودگی سے دہشت گردی کو فروغ ملا/علاقائی ممالک کو امریکی فریب سے آگاہ رہنا چاہیے

خبر آئی ڈی: 4140568 -
افغانستان کے سابق صدر حامد کرزائی نے افغانستان میں امریکہ کو دہشت گردی کے فروغ کا اصلی سبب قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ دہشت گردوں کے خاتمہ کے بجائے دہشت گردوں کو قوت اور مدد بہم پہنچا رہا ہے افغانستان میں امریکہ نے دہشت گردی کو فروغ دیا ہے امریکہ کے دہشت گردوں کے ساتھ قریبی روابط ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی کے بین الاقوامی امور کے نامہ نگار کے ساتھ گفتگو میں افغانستان کے سابق صدر حامد کرزائی نے افغانستان میں امریکہ کو دہشت گردی کے فروغ کا اصلی سبب قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ دہشت گردوں کے خاتمہ کے بجائے دہشت گردوں کو قوت اور مدد بہم پہنچا رہا ہے افغانستان میں امریکہ نے دہشت گردی کو فروغ دیا ہے امریکہ کے دہشت گردوں کے ساتھ قریبی روابط ہے۔ افغانستان کے سابق صدر حامد کرزائی نے کہا کہ امریکہ خطے میں مسلمانوں میں تفرقہ ڈال کر اپنے شوم اہداف تک پہچنے کی کوشش کررہا ہے۔

حامد کرزائی نے علاقائی اسلامی ممالک پر زوردیا کہ وہ امریکہ کے شوم منصوبوں سے باخبـر رہیں کیونکہ غیر علاقائي طاقتیں افغانستان کے ذریعہ خطے میں نفوذ پیدا کرسکتی ہیں۔

افغانستان کے سابق صدر حامد کرزائی نے امریکہ کے ساتھ اپنی دوستی اور پھر امریکہ سے دوری اور اس پراپنی تنقید کے بارے میں سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ 11 ستمبر کے بعد امریکہ اقوام متحدہ کے تعاون سے افغانستان میں اس غرض سے داخل ہوا کہ افغانستان پر اندرونی طور پر ایک ہمسایہ ملک نے قبضہ کررکھا ہے لہذا افغانستان کے عوام کو آزاد کرایا جائے اور اقتدار ان کے ہاتھ میں سونپا جائے، حتی 11 ستمبر سے قبل بھی میں چاہتا تھا کہ امریکہ افغانستان میں آئے اور ہم سے تعاون کرے اور ہمیں مصیبت سے نجات دلائے لیکن امریکہ آیا اور وہ خود ہمارے لئے ایک بڑی مصیبت بن گیا۔ امریکہ نے سویت یونین کے خلاف افغان قوم کی بڑی مدد کی اور ہم نے سوچا کہ وہ اب بھی ہماری مدد کرےگا لیکن امریکہ نے ہماری توقع کے بالکل بر عکس عمل کیا۔

افغانستان کے سابق صدر نے امریکہ کی طرف سے افغانستان میں داعش کی حمایت پر مبنی سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ اس میں کوئی شک و شبہ نے امریکہ خطے میں دہشت گرد گروہوں کی مدد اور سرپرستی  کررہا ہے داعش کی تشکیل میں امریکہ کا اہم کردار ہے اور داعش کو افغانستان میں بھیجنے میں بھی امریکہ کا اہم نقش ہے ۔ افغانستان میں داعش کی لگام غیر علاقائی طاقتوں کے ہاتھ میں ہے۔ داعش نے ایسے وقت افغانستان میں اپنی موجودگی کا اعلان کیا جبکہ امریکہ کو افغانستان میں 16 سال دہشت گردی کا مقابلہ کرنے میں بیت کئے ہیں اس سے معلوم ہوتا ہے کہ امریکہ نے افغانستان میں دہشت گردی کا مقابلہ نہیں کیا بلکہ دہشت گردی کو فروغ دے رہا ہے۔

افغانستان کے سابق صدر نے ایران اور افغانستان کے باہمی تعلقات کے بارے میں سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ ایران افغان قوم کا بھائی اور دوست ملک ہے ایران نے ہمیشہ افغان قوم کی بہتری کے سلسلے میں قدم اٹھایا ہے ہم ایران کے شکر گزار ہیں جو حساس اور مشکل وقت میں افغان قوم کے ساتھ رہا ہے افغان قوم کے ایران کے ساتھ بہترین تعلقات ہیں اور ہمیں ایران کے ساتھ باہمی تعاون پر فخر حاصل ہے۔

افغانستان کے سابق صدر نے آئندہ صدارتی انتخاب میں شرکت کے بارے میں سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ میری صدارت کا دور ختم ہوچکا ہے میں آئندہ صدارتی انتخاب میں ہرگز حصہ نہیں لوں گا ۔

لیبلز

تبصرہ ارسال

3 + 11 =