امریکہ کی اسرائيل کے لئے جاسوسی // لبنانی حکومت سوفیصد لبنانی ہے

مہر نیوز- 25جون 2011ء :حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصر اللہ نے لبنانی حکومت کو سوفیصد لبنانی قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ لبنانی حکومت تمام لبنانی عوام کی نمائندہ حکومت ہے اور حزب اللہ کے اس میں صرف دو وزیر ہیں۔ حزب اللہ نے دو امریکی جاسوسوں کو گرفتار کیا ہے جو اسرائیل کے لئے جاسوسی کررہے تھے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے المنار کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصر اللہ نے لبنانی حکومت کو سوفیصد لبنانی قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ لبنانی حکومت تمام لبنانی عوام کی نمائندہ حکومت ہے اور حزب اللہ کے اس میں صرف دو وزیر ہیں۔ حزب اللہ نے دو امریکی جاسوسوں کو گرفتار کیا ہے جو اسرائیل کے لئے جاسوسی کررہے تھے۔سید حسن نصر اللہ نے کہا کہ اسرائیل جب حزب اللہ میں نفوذ پیدا کرنے میں ناکام ہوگیا تو اس نے امریکی سی آئی اے کے جاسوسوں کو حزب اللہ میں نفوذ پیدا کرنے کے لئے استعمال کیا لیکن حزب اللہ نے امریکی سی آئی اے کے جاسوسوں کو بھی گرفتار کرلیا ہے انھوں نے کہا کہ سی آئی اے کے جاسوسوں کو لبنان میں امریکی سفارتخانہ کی پشتپناہی اور مدد حاصل تھی  سید حسن نصر اللہ نے کہا کہ حزب اللہ نے تین جاسوس پکڑے ہیں جن میں دو کا سی آئی اے کے ساتھ تعلق ہے جبکہ تیسرے کے بارے میں تحقیقات جاری ہیں۔ انھوں نے کہا کہ حزب اللہ کے مقابلے میں اسرائيل کی ناتوانی کا سلسلہ جاری ہے اور اب اسرائیل نے امریکی سی آئی اے سے استفادہ کرنا شروع کردیا ہے۔ سید حسن نصر اللہ نے کہا کہ بعض عرب حکام ایران کے خلاف اسرائیل کے ساتھ تعاون کررہے ہیں اور ان کی یہ شیطنت خود ان کے لئے وبال جان بن جائے گی انھوں نے کہا کہ شام اور ایران دو ایسے ممالک ہیں جو اسلامی مقاومت کے ساتھ ہیں اور امریکہ و اسرائيل اسلامی مقاومت کو کمزور کرنے کے لئے ان دو ممالک کے خلاف سازش کررہے ہیں لیکن ایران اور شام کے خلاف ان کی تمام سازشیں ناکام ہوگئی ہیں۔

News Code 1343407

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 4 =