ہندوستانی ریاست راجستھان میںمظاہرین نےپولیس انسپکٹر کو زندہ جلا دیا

ہندوستانی ریاست راجستھان میں پولیس کی طرف سے خاطر خواہ کارروائی نہ کرنے کے خلاف احتجاج کرنے والے مظاہرین نے پولیس انسپکٹر کو زندہ جلادیا ہے۔

مہرخبررساں ایجنسی نے ہندوستانی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ہندوستانی ریاست راجستھان میں پولیس کی طرف سے خاطر خواہ کارروائی نہ کرنے کے خلاف احتجاج کرنے والے مظاہرین نے پولیس انسپکٹر کو زندہ جلادیا ہے۔پولیس حکام کے مطابق ریاست کے سوائی مادھو پر ضلع میں ایک پولیس سٹیشن کے چیف انسپکٹر آف پولیس پھول محمد کو ہجوم نے زندہ جلا ڈالا۔ ریاست کے ایک سینیئر پولیس آفیسر نودیپ سنگھ نے سرکاری ٹی وی چینل دوردرشنسے گفتگو میں کہا ہے کہ کہ سوائی مادھو پور کے شہر میں انسپکٹرپھول محمد کو احتجاجی ہجوم نے ان کی جیپ میں آگ لگا کر اس وقت زندہ جلا دیا جب وہ اس جگہ پر پہنچے جہاں ایک شخص نے پانی کی ٹنکی کے اوپر سے چھلانگ لگاکر خود کشی کی تھی۔انسپکٹرپھول محمد پر یہ حملہ اس وقت کیا گیا جب وہ اس شخص کے قتل کیس کی تفتیش کے لیے پہنچے جس نے ایک خاتون کے قتل کے احتجاج میں چھلانگ لگا کر اپنی جان دیدی تھی۔مقامی لوگوں کا الزام تھا کہ پولیس اس مقتول خاتون کے قتل کے ایک ماہ بعد بھی مجرموں کا پتہ لگانے میں ناکام رہی تھی جس سے لوگوں میں شدید ناراضگی تھی۔اطلاعات کے مطابق دو شخص پانی کی ٹنکی پر اس دھمکی کے ساتھ چڑھے تھے کہ اگر خاتون کے قاتلوں کو گرفتار نہ کیا گيا تو وہ چھلانگ لگا کر خودکشی کرلیں گے۔ بعد میں ان میں سے ایک شخص راجیش مینا نےچھلانگ لگا کر اپنی جان دیدی تھی۔

News Code 1276483

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 2 =