عراقی پارلیمنٹ کو عوام اور مراجع عظام کے نظریات کو مد نظر رکھنا چاہیے

ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سکریٹری نے بغداد – واشنگٹن سلامتی معاہدے پر عراقی پارلیمانی نمائندوں کی تشویش کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ عراقی پارلیمنٹ کو عوام اور مراجع عظام کے نظریات کو بھی مد نظر رکھنا چاہیے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سکریٹری سعید جلیلی نے بغداد واشنگٹن سلامتی معاہدے پر عراقی پارلیمانی نمائندوں کی تشویش کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ عراقی پارلیمنٹ کو عوام اور مراجع عظام کے نظریات کو بھی مد نظر رکھنا چاہیے۔ جلیلی نے اپنےآرمینیائی ہم منصب کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے بغداد واشنگٹن معاہدے پر اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اس معاہدے کے سلسلے میں عراقی نمائندوں ، عوام اور مراجع عظام کا مؤقف ہر لحاظ سے اہم ہے ۔ جلیلی نے کہا کہ ہر معاہدے میں عراقی عوام کے مفادات اور عراق کی بالا دستی قائم رہنی چاہیے جبکہ امریکہ عراق کے اس حق کو مختلف بہانوں سے پامال کرنے کی کوشش کررہا ہے۔

اس ملاقات میں آرمینیا کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سکریٹری آرٹور باغداساریان نے ایران اور آرمینیا کے باہمی روابط کو خوب توصیف کرتے ہوئے کہا کہ ایران اور آرمینیا نے سیاسی ، اقتصادی اور سلامتی کے شعبوں میں 10 معاہدوں پر دستخط کئے ہیں اور ایران اور آرمیلنیا دو ہمسایہ اور دوست ملک ہیں۔

 

News Code 789152

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 8 =