بھارتی مسلمانوں کا گستاخي میں ملوث عہدیداروں کی فوری طور پر گرفتاری کا مطالبہ

ہندوستان کے مختلف شہروں میں اسلامی مقدسات کی توہین کے خلاف مسلمانوں کے احتجاجی مظآہروں کا سلسلہ جاری ہے بھارتی مسلمانوں نے گستاخي میں ملوث بی جے پی کےعہدیداروں کی فوری گرفتاری کا مطالبہ کیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ہندوستان کے مختلف شہروں میں اسلامی مقدسات کی توہین کے خلاف مسلمانوں کے احتجاجی مظآہروں کا سلسلہ جاری ہے بھارتی مسلمانوں نے گستاخي میں ملوث بی جے پی کےعہدیداروں کی فوری گرفتاری کا مطالبہ کیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق بھارت کے شہر بریلی میںکئی لاکھو مسلمانوں میں احتجاج میں حصہ لیا اور بھارتی حکومت سے اسلامی مقدسات اور پیغمبر اسلام (ص) کی توہین کرنے والے عہدیداروں کو فوری طور پر گرفتار کرنے کا مطالبہ کیا ہے۔ بھارت میں ہندو انتہا پسندی کے خلاف مسلمانوں کی آواز کو دبانے کے لیے مودی حکومت نے نئے ہتھکنڈے اپناتے ہوئے گستاخانہ بیانات کے خلاف احتجاج کرنے والے مسلمانوں کے گھر گرانا شروع کردیئے ہیں۔بھارتی میڈیا کے مطابق اس حوالے سے سوشل میڈیا پر ویڈیوز بھی وائرل ہوئی ہیں جس میں ہندو انتہا پسند پولیس کی نگرانی میں مسلمانوں کے گھروں کو بلڈوزر کی مدد سے مسمار کررہے ہیں۔

News Code 1911271

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha