بھارت میں ہندو دہشت گردوں کے حملے میں مسلمان جوان جاں بحق

بھارتی ریاست اتر پردیش میں ہندو دہشت گردوں نے مسلمان نوجوان پر حملہ کرکے اسے بہیمانہ طریقے سے قتل کردیا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ  بھارتی ریاست اتر پردیش میں ہندو دہشت گردوں نے مسلمان نوجوان  پر حملہ کرکے اسے بہیمانہ طریقے سے قتل کردیا۔

اطلاعات کے مطابق اتر پردیش کی تحصیل شاملی سے تعلق رکھنے والے22 سالہ نوجوان سمیر کو انتہا پسندوں ہندوؤں نے سر پر لاٹھیوں کے  وار کرکے قتل کردیا۔ اس بارے میں متوفی سمیر کے چچا عادل کا کہنا ہے کہ سمیر کام سے گھر واپس آتے وقت بس اسٹیشن پر اترا تو ہندو انتہا پسندوں نے اس پر لاٹھیوں اور لوہے کی سلاخوں سے حملہ کردیا۔

ہندو انتہا پسندوں کی جانب سےسر عام ہونے والے اس قتل سے سمیر کے اہل خانہ خوف کا شکار ہیں، جب کہ پولیس نے سمیر کے چچا عادل کی مدعیت میں 8 افراد کے خلاف قتل کا مقدمہ درج کر کے ہندو دہشت گردوں کی گرفتاری کے لیے کوششیں شروع کردی ہیں۔

واضح رہے کہ ایک ماہ قبل بھی اتر پردیش کے ہی ایک گاؤں میں انتہا پسند ہندوؤں نے مسلمان رکشہ ڈرائیور کو بدترین تشدد کا نشانہ بنایا تھا۔

News Code 1908160

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 0 =