یوکرائن کے نئے صدر نے پارلیمنٹ تحلیل کر دی

یوکرائن کے نئے صدر ولودومیر زیلینسکی نے ملکی صدر کی حیثیت سے حلف اٹھاتے ہی پارلیمنٹ تحلیل کر دی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ یوکرائن کے نئے  صدر ولودومیر زیلینسکی نے ملکی صدر کی حیثیت سے حلف اٹھاتے ہی پارلیمنٹ تحلیل کر دی ہے۔ اطلاعات کے مطابق یوکرائن کے نو منتخب صدر نے اپنے عہدے کا حلف اٹھا لیا ہے اور اپنے پہلے حکم نامے میں پارلیمنٹ کو تحلیل کردیا ہے تاکہ نئے منتخب لوگوں کو ملک کی خدمت کرنے کا موقع ملے، نئے صدر نے حلف اٹھانے کے بعد اپنی تقریر میں مشرقی حصے میں جنگی حالات ختم کرنے کے عزم کا اظہار بھی کیا۔

صدر ولودومیر زیلینسکی نے حلف اٹھانے کے لیے روایتی جاہ و حشمت کے بجائے اپنے ووٹرز اور مداحوں کے درمیان پیدل چلتے ہوئے پارلیمنٹ میں داخل ہوئے اور اس دوران لوگوں سے ہاتھ ملایا اور تصاویر بھی بنوائیں۔ زیلینسکی نے گزشتہ ماہ صدارتی انتخابات میں 73 فیصد ووٹ حاصل کر کے کامیابی حاصل کی تھی۔

News Code 1890712

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 15 =