پاکستان میں شیعہ مسلمانوں کا قتل عام جاری / اس بار علی رضا عابدی درجہ شہادت پر فائز

پاکستان میں سابق رکن قومی اسمبلی اور ایم کیو ایم پاکستان کے سینئر رہنما علی رضا عابدی کو کراچی میں مسلح دہشت گردوں نے فائرنگ کرکے شہید کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان میں سابق رکن قومی اسمبلی اور ایم کیو ایم پاکستان کے سینئر رہنما علی رضا عابدی کو مسلح دہشت گردوں نے  فائرنگ کرکے شہید کردیا ہے۔ پولیس کے مطابق کراچی کے علاقے ڈیفنس کے خیابان غازی میں علی رضا عابدی پر ان کے گھر کے باہر 2 موٹر سائیکل سوار حملہ آوروں نے فائرنگ کی ۔ فائرنگ کا واقعہ اس وقت پیش آیا جب46 سالہ علی رضا عابدی خود گاڑی ڈرائیور کرکے گھر پہنچے تھے ،گاڑی سے اترتے ہی تھے کہ انہیں 5 گولیاں ماری گئیں،جن میں سے 3گولیاں ان کے سر ،ایک گردن اور ایک پیٹ میں لگی ۔پولیس کے مطابق دہشت گرد ڈیفنس فیز فائیو میں واقع ان کے گھر کے باہر گھات لگاکر بیٹھے ہوئے تھے ،دفتر سے گھر پہنچنے پر گاڑی سے اترتے ہی ملزمان نے خود کار ہتھیار سے علی رضا عابدی پر فائرنگ کی اور فرار ہوگئے ۔ذرائع کے مطابق علی رضا عابدی کو ان کے والد اخلاق عابدی انتہائی تشویشناک حالت میں قریبی اسپتال لے گئے ،جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گئے ۔ایس ایس پی ساوتھ طارق دھاریجو نے واقعے کو ٹارگٹ کلنگ قرار دیتے ہوئے کہا کہ جائے وقوع سے مختلف اقسام کی گولیوں کے خول ملے ہیں، اسلحے کا تعین فارنزک کے بعد کیا جاسکے گا۔وزیراعظم عمران خان ،وزیر اعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے علی رضا عابدی کے قتل کی مذمت کی اور اس حوالے سے اتبدائی رپورٹ طلب کرلی ہے ۔علی رضا عابدی نے رواں برس 25 جولائی کو ہونے والے عام انتخابات میں این اے 243 میں وزیراعظم عمران خان کے مد مقابل الیکشن لڑا تھا،وہ ووٹوں کے لحاظ سے دوسرے نمبر پر رہے تھے ۔

News Code 1886761

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 5 =