امریکی صدر کا خاشقجی کی تکلیف دہ اور درناک آڈیو سننے سے انکار

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ انہیں سعودی صحافی جمال خاشقجی کے قتل کی تکلیف دہ اور دردناک آڈیو ریکارڈنگ پر مکمل بریف کیا گیا لیکن وہ خود اس دردناک اور تکلیف دہ آڈیو کو نہیں سن سکتے ۔

مہر خبررساں ایجنسی نے فوکس نیوز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا ہے کہ انہیں سعودی صحافی جمال خاشقجی کے قتل کی تکلیف دہ اور دردناک آڈیو ریکارڈنگ پر مکمل بریف کیا گیا لیکن وہ خود اس دردناک اور تکلیف دہ آڈیو  کو نہیں سن سکتے ۔ امریکی صدر کا کہنا تھا کہ یہ ایک تکلیف دہ اور خوفناک آڈیو تھی اور یہ بہت پرتشدد، عجیب اور دردناک تھی۔ واضح رہے کہ امریکی خفیہ ادارے (سی آئی اے) نے اپنی تحقیقات میں واضح کیا ہے کہ صحافی خاشقجی کے قتل میں سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان ملوث ہیں اور خاشقجی کے قتل کا حکم ولیعہد محمد بن سلمان نے ہی دیا تھا۔ صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے کہا کہ ولیعہد محمد بن سلمان نے مجھے یہی کہا ہے کہ وہ اس قتل میںم لوث نہیں ہیں ۔ کیا سعودی عرب کے ولیعہد جھوٹ بولتے ہیں؟ سعودی عرب کے ولیعہد اور حکومت نے پہلے خاشقجی کے قتل سے ہی انکار کیا تھا اور سعودی عرب خاشقجی قتل کے سلسلے میں ابتدا ہی سے جھوٹ بول رہا ہے اور اس نے اب تک خاشقجی کی لاش کو بھی ورثا کے حوالے نہیں کیا۔

News Code 1885748

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 3 =