ہندوستانی حکومت کی سرپرستی میں مسلمانوں کے خلاف جھوٹی خبریں پھیلانے کا انکشاف

ہندوستان میں بر سر اقتدار ہندو انتہا پسند حکومت کی سرپرستی میں مسلمانوں کے خلاف جھوٹی خبریں پھیلانے کا انکشاف سامنے آيا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ہندوستانی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ہندوستان میں بر سر اقتدار ہندو انتہا پسند حکومت کی سرپرستی میں مسلمانوں کے خلاف جھوٹی خبریں پھیلانے کا انکشاف سامنے آيا ہے۔

اطلاعات  کے مطابق بھارت میں سرکاری سرپرستی میں جھوٹی خبریں پھیلانے کے لیے سوشل میڈیا پرانتہاپسند جعلی خبریں پھیلا کر مسلمانوں کو بدنام کرنے کی ناکام کوششوں میں مصروف ہیں۔ ہندو انتہا پسندوں نے من گھڑت خبریں پھیلا کر مسلمانوں کو نشانہ بنانا معمول بنا لیا، وزیراعظم مودی کے حامی نیٹ ورکس اور سوشل میڈیا جعلی خبریں پھیلانے میں پیش پیش ہیں۔جعلی خبروں کو قوم پرستی کے نام پر منصوبہ بندی کے تحت پھیلایا جاتا ہے، مسلمان مخالف اور نفرت انگیز پیغامات بغیر تحقیق آگے بڑھائے جاتے ہیں۔رپورٹ کے مطابق ان خبروں پر مسلمانوں کے نقصان کومودی سرکار مکمل نظرانداز کرتی ہے اور ذمہ داروں کے خلاف کوئی ایکشن نہیں لیتی۔بھارت میں یہ کوئی نئی بات نہیں اس سے قبل متعدد بار بھارت میں موجود مسلمان شہری ہندوں انتہا پسندوں کے ظلم کا شکار ہوئے۔کبھی گائے ذبح کرنے کے نام پر مسلمانوں کو موت کے گھاٹ اتار دیا جاتا ہے تو کبھی تعصب اور اسلام دشمنی میں ہندو انتہا پسند، مسلمانوں کو اذیت پہنچاتے ہیں۔

News Code 1885601

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 12 =