سعودیہ کا خاشقجی کو پہلے سے طے شدہ منصوبے کے تحت قتل کرنے کا اعتراف

ترکی کے وزير خارجہ مولود چاؤش اوغلو نے کہا ہے کہ سعودی عرب نے خاشقجی کو پہلے سے طے شدہ منصوبے کے تحت قتل کرنے کا اعتراف کرلیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے اسپوٹنک کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ترکی کے وزير خارجہ مولودچاؤش اوغلو نے کہا ہے کہ سعودی عرب نے خاشقجی کو پہلے سے طے شدہ منصوبے کے تحت قتل کرنے کا اعتراف کرلیا ہے۔

ترک وزير خارجہ نے کہا کہ سعودی عرب کے اٹارنی جنرل سعود المعجب  آج ترکی کے دورے پر ہیں جس نے اعتراف کیا ہے کہ خاشقجی کو پہلے سے طے شدہ منصوبے کے تحت قتل کیا گیا ہے۔ ترک وزير خارجہ نے کہا کہ سعودی عرب پر بہت بڑی ذمہ داری عائد ہوتی ہے کیونکہ خاشقجی کے قتل میں ملوث تمام افراد سعودی عرب میں گرفتار ہوچکے ہیں۔ اور ان افراد نے خاشقجی کو کسی اہم شخصیت کے حکم پر قتل کیا ہے۔ ذرائع کے مطابق خاشقجی کو سعودی عرب کے ولیعہد محمد بن سلمان کے حکم پر ترکی کے شہر استنبول میں 2 اکتوبر کو بہیمانہ طور پر قتل کیا گیا جبکہ خاشقجی کے قتل کے بعد سعودی عرب کو عالمی سطح پر شدید رسوائی اور بدنامی کا سامنا ہے۔

News Code 1885194

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 10 =