بیرونی مداخلت کی وجہ سے یمن، شام اور لیبیا کے حالات خراب ہوئے ہیں

قطر کے بادشاہ نے دوحہ میں پارلیمانی یونین کے 140 ویں اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ بیرونی مداخلت کی وجہ سے یمن، شام اور لیبیا کے حالات خراب ہوئے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے قطر کی سرکاری خبررساں ایجنسی " قنا " کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ قطر کے بادشاہ شیخ تمیم بن حمد آل ثانی نے دوحہ میں پارلیمانی یونین کے 140 ویں اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ بیرونی مداخلت کی وجہ سے یمن، شام اور لیبیا کے حالات خراب ہوئے ہیں۔ قطر کے بادشاہ نے شام، لیبیا اور یمن کے موجودہ حالات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ بعض علاقائی ممالک بھی شام ، یمن اور لیبیا کے حالات خراب ہونے کے ذمہ دار ہیں لیکن مذکورہ ممالک کے حالات خراب ہونے کی اصل وجہ بیرونی  اور غیر علاقائی طاقتیں ہیں۔ قطر کے بادشاہ نے کہا کہ انصاف کی فراہمی قانون کی حاکمیت کے بغیر ممکن نہیں جبکہ بہت سے ممالک انصاف کے بغیر ہی قانون کی حاکمیت  پر اعتقاد رکھتے ہیں۔ اس نے کہا کہ عالمی قوانین پر عمل کمرنگ ہورہا ہے اور طاقتور ممالک کمزور ممالک پر اپنی دھونس جمانے کی کوشش کررہے ہیں۔ قطر میں پارلیمانی یونین کا 140 واں اجلاس 5 دن تک جاری رہےگا اس اجلاس میں 149 ممالک کے پارلیمانی وفود شریک ہیں۔

News Code 1889490

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 13 =