فرانس میں دہشت گردانہ حملے کے بعد قومی پرچم سرنگوں

فرانس کے شہر اسٹراس برگ کی کرسمس مارکیٹ میں حملہ آور کی فائرنگ سے 3 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے جس کے بعد ملک بھر میں سوگ منایا گیا اور قومی پرچم سرنگوں رہا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے اے ایف پی کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ فرانس کے شہر اسٹراس برگ کی کرسمس مارکیٹ میں حملہ آور کی فائرنگ سے 3 افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے جس کے بعد ملک بھر میں سوگ منایا گیا اور قومی پرچم سرنگوں رہا۔ اطلاعات کے مطابق رات گئے کرسمس مارکیٹ میں 3 افراد کی ہلاکت کے واقعے کے بعد اسٹراس برگ میں مارکیٹ بند اور ہر طرف خاموشی تھی۔ پولیس اسٹراس برگ سے تعلق رکھنے والے 29 حملہ آور کو پکرنے کی کوشش کررہی تھی جبکہ شہری تحفظ کے لیے ریسٹورنٹس اور بارز میں گھس گئے تھے تاہم پولیس نے صورت حال کو قابو کرتے ہوئے شہریوں کو سکیورٹی حصار میں باہر نکال لیا۔فرانس میں بھر میں سوگ منایا گیا، قومی پرچم سرنگوں اور تھیٹر اور دیگر شوز کو معطل کردیا گیا تاہم اسکول کھلے رہے۔خیال رہے کہ فرانس میں مارکیٹوں میں حملوں کا سلسلہ 2015 میں شروع ہوا تھا جب دہشت گردوں کے حملوں میں متعدد افراد ہلاک اور زخمی ہوگئے تھے۔ ذرائع کے مطابق امریکہ اور مغربی ممالک میں پہلے متحد ہوکر ہزاروں دہشت گردوں کو شام میں دہشت گردی اور صدر بشار اسد کی حکومت گرانے کے لئے بھیجا تھا اور انھیں فوجی تربیت اور بڑی مقدار میں فوجی ساز و سامان بھی فراہم کیا، لیکن دہشت گرد بشار اسد کو ہٹانے میں ناکام ہوگئے جس کے بعد انھوں نے واپسی پر اپنے ہی ممالک کو دہشت گردانہ حملوں کا نشانہ بنادیا۔

News Code 1886398

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 9 =