پاکستان سے طالبان کومدد مل رہی ہے

امریکہ نے پاکستان پر الزام عائد کیا ہے کہ افغانستان میں سرگرم طالبان کو پاکستان سے مدد مل رہی ہے جبکہ بعض ذرائع‏ کے مطابق امریکی خفیہ ایجنسی سی آئی اے اور سعودی عرب طالبان شدت پسندوں کو پیشرفتہ ہتھیار اور مالی مدد فراہم کررہے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے واشنگٹن پوسٹ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکہ نے پاکستان پر الزام عائد کیا ہے کہ افغانستان میں سرگرم طالبان کو پاکستان سے مدد مل رہی ہے جبکہ بعض ذرائع‏ کے مطابق امریکی خفیہ ایجنسی سی آئی اے اور سعودی عرب طالبان شدت پسندوں پیشرفتہ ہتھیار اور مالی مدد فراہم کررہے ہیں۔ایک امریکی عہدے دارکے مطابق اتحادی فوج کی کامیابیوں کے لیے اسلام آبادکوشمالی وزیرستان میں کارروائی کرکے شدت پسندوں کے محفوظ ٹھکانے ختم کرنا ہوں گے۔ امریکی محکمہ دفاع نے کانگریس کو پیش کی گئی ششماہی رپورٹ میں بتایا ہے کہ افغانستان میں طالبان کازورٹوٹ گیا، حالیہ مہینوں میں نیٹو فورسز کو طالبان کیخلاف ٹھوس کامیابی ملی ہے،انھیں جنوبی افغانستان سے پیچھے دھکیل دیا گیا ہے۔اور ان کے اہم علاقے دوبارہ حاصل کر لیے گئے ہیں۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ شرپسندوں کوپاکستان میں محفوظ ٹھکانوں سے مدد ملتی ہے۔ جس سے اتحادی افواج کی کوششوں کونقصان پہنچ رہاہے۔امریکہ پاکستان پر دباؤ ڈآل رہا ہے کہ وہ شمالی وزیر ستان میں فوجی کارروائی کرے بعض ذرائع کا کہنا ہے کہ امریکہ طالبان کے ذریعہ پاکستان میں عدم استحکام پیدا کرنے کی کوشش کررہا ہے اور وہ القاعدہ اور طالبان کو بہانہ بنا کر پاکستان کے ایٹمی اثاثوں کو تباہ کرنے کی کوشش کررہا ہے۔ القاعدہ اور طالبان دونوں سعودی عرب کی تنظیمیں ہیں جنیھں سعودی عرب سے مالی تعاون مل رہا ہے اور سعودی عرب اور امریکہ کے گہرے روابط ہیں۔

News Code 1301097

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 9 + 6 =