روس اور امریکہ کے بحری جنگی جہاز تصادم سے محفوظ

بحرالکاہل میں روس اور امریکہ کے بحری جنگی جہاز ایک دوسرے کے اتنے قریب آگئے کہ دونوں کے درمیان تصادم کا خدشہ پیدا ہوگیا تاہم دونوں جہاز بال بال بچ گئے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہےکہ چین کے جنوب مشرق میں بحرالکاہل کے بیچوں بیچ روس اور امریکہ کے بحری جنگی جہاز محض 50 فٹ کی دوری پر آگئے، سمندر کی اونچی اونچی لہروں کے باعث عین ممکن تھا کہ دونوں کی ٹکر ہوجاتی تاہم معجزانہ طور پر ایسا نہ ہوا۔ اتنے بڑے جنگی بحری جہازوں کے درمیان تصادم سے جہاں بڑے پیمانے پر نقصان کا احتمال تھا وہیں اس حادثے کے نتیجے میں دونوں بڑے حریفوں کے درمیان پیدا ہونے والی تلخی کے خطے کے امن پر بھی دور رس نتائج مرتب ہوسکتے تھے۔

سخت حریفوں کے جنگی بحری جہازوں کے اتنے قریب آجانے کی وجہ کا تاحال تعین نہیں کیا جا سکا تاہم دونوں ہی ایک دوسرے کو مورد الزام ٹہرا رہے ہیں۔ روس کا کہنا ہے کہ امریکی جہاز یو ایس ایس چانسلر سویل ہمارے جہاز کے اتنے قریب آگیا کہ عملے کو حفاظتی اقدامات کرنا پڑے۔ دوسری جانب امریکہ کا کہنا ہے کہ روسی بحری جہاز  ونوگرادوف نے امریکی جنگی جہاز کے سامنے صرف 50 میٹر کے فاصلے تک پہنچ کر ایک غیر محفوظ قدم اُٹھایا جس کے نتائج بھیانک بھی ہوسکتے تھے۔

News Code 1891201

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 7 =