فلسطین دنیا کے تمام تحولات کا مرکز// تہران کانفرنس کامیاب رہی

مہر نیوز- 2 اکتوبر2011ء: عراق کے سابق وزیر اعظم نے تہران میں انتفاضہ فلسطین کی حمایت میں پانچویں بین الاقوامی کانفرنس کے ضمن میں گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ رہبر معظم انقلاب اسلامی نے کل اپنے اہم خطاب میں مسئلہ فلسطین کو دنیا کا اصلی اور محوری مسئلہ قراردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق عراق کے سابق وزیر اعظم ابراہیم الجعفری نے تہران میں انتفاضہ فلسطین کی حمایت میں پانچویں بین الاقوامی کانفرنس کے ضمن میں گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ رہبر معظم انقلاب اسلامی نے کل اپنے اہم خطاب  میں مسئلہ فلسطین کو دنیا کا اصلی اور محوری مسئلہ قراردیا ہے۔ انھوں نےکہا کہ اس کانفرنس میں اکثر فلسطینی اور جہادی گروہ شریک تھے جو اس کانفرنس کی سب سے بڑی کامیابی ہے جعفری نے فلسطین کے بارے میں رہبر معظم انقلاب اسلامی کے خطاب کو بہت ہی اہم اور تاریخی قراردیتے ہوئے کہا کہ رہبر معظم نے اپنے خطاب میں مسئلہ فلسطین کو دنیا کا اصلی اور محوری مسئلہ قراردیا ہے اب مسئلہ فلسطین کی پہلے جیسی حالت نہیں رہی بلکہ مسئلہ فلسطین دنیا کا اہم اور مرکزی مسئلہ بن گيا ہے۔ انھوں نے کہا کہ اب تمام اقوام مسئلہ فلسطین کے حل کی خواہاں ہیں جعفری نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے مسئلہ فلسطین کے حل کے لئے جو نظریہ پیش کیا ہے وہ منصفانہ ، منطقی اور برحق نظریہ ہے۔

News Code 1422399

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 6 =