ہندوستان کا چین کے تین صحافیوں کو ملک چھوڑنے کا حکم

ہندوستان نے مشکوک سرگرمیوں میں ملوث ہونے کا الزام عائد کرتے ہوئے چین کی سرکاری خبر رساں ایجنسی شینہوا کے تین صحافیوں کو ملک سے نکل جانے کا حکم دے دیا اور ان کے ویزے کی تجدید سے انکار کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ہندوستان ٹائمز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ ہندوستان نے مشکوک سرگرمیوں میں ملوث ہونے کا الزام عائد کرتے ہوئے چین کی سرکاری خبر رساں ایجنسی شینہوا کے تین صحافیوں کو ملک سے نکل جانے کا حکم دے دیا اور ان کے ویزے کی تجدید سے انکار کردیا ہے۔

اطلاعات  کے مطابق جن تین صحافیوں کو 31 جولائی تک ہندوستان سے نکل جانے کا حکم دیا گیا ہے ان میں شینہوا کے نئی دہلی اور ممبئی کے بیورو چیفس وو شیانگ اور لو تانگ بھی شامل ہیں جبکہ تیسرا صحافی شینہوا کے لیے رپورٹنگ کرتا ہے اور وہ ممبئی میں موجود ہے۔ رپورٹ کے مطابق ان تینوں صحافیوں کو ملک سے نکالنے کے حوالے سے حکومت نے کوئی وجہ نہیں بتائی تاہم ذرائع کا کہنا ہے کہ مبینہ طور پر یہ صحافی ماورائے صحافت سرگرمیوں میں ملوث ہونے کی وجہ سے سکیورٹی ایجنسیوں کی توجہ کا مرکز بنے ہوئے تھے۔

ذرائع کے مطابق تین صحافیوں کو نکالنے کا مطلب یہ نہیں کہ ہندوستان میں شنہوا کے صحافیوں کا خیر مقدم نہیں کیا جائے گا، نیوز ایجنسی ان تین صحافیوں کی جگہ دوسرے جرنلسٹس کو ہندوستان بھیج سکتی ہے، ایسا نہیں ہے کہ شینہوا کو ہندوستان میں اپنا نیوز آپریشن بند کرنا ہوگا۔

شینہوا کے صحافی وو شیانگ گزشتہ 7 برس سے ہندوستان میں تعینات ہیں جبکہ دیگر دو صحافی ایک برس قبل ہی ممبئی آئے ہیں۔ تجزیہ کاروں نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ چین بھی بدلے کے طور پر ہندوستانی صحافیوں کو ملک بدر کرسکتا ہے۔

News Code 1865713

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 17 =