سعودی عرب نے خاشقجی کے قتل سے متعلق امریکی سینیٹ کی قرارداد کو مسترد کردیا

سعودی عرب نے سعودی صحافی جمال خاشقجی کے بہیمانہ قتل سے متعلق امریکی سینیٹ کی قرارداد کو مسترد کردیا ہے امریکی سینیٹ نے خاشقجی کے قتل کا ذمہ دار سعودی ولیعہد محمد بن سلمان کو قراردیا تھا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے العالم کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ سعودی عرب نے سعودی صحافی جمال خاشقجی کے بہیمانہ قتل سے متعلق امریکی سینیٹ کی قرارداد کو مسترد کردیا ہے۔ سعودی عرب نے یمن میں عرب اتحاد کی فوجی امداد بند کرنے اورولی عہد محمد بن سلمان کوصحافی جمال خاشقجی کے قتل کا ذمہ دار ٹھہرانے کی امریکی سینیٹ کی قرارداد کی مذمت کی ہے۔ سعودی وزارت خارجہ کا کہنا ہے قرارداد غلط الزامات پرمبنی ہے۔ بے بنیاد الزام کی بنیاد پر سعودی عرب کے خلاف قرارداد لانا ملک کے اندرونی معاملات میں مداخلت ہے۔ امریکی سینیٹ میں مذمتی قرارداد منظورکی گئی تھی جس میں کہا گیا تھا کہ سعودی ولی عہد محمد بن سلمان صحافی جمال خاشقجی کے قتل کے ذمہ دار ہیں۔

واضح رہے کہ سعودی صحافی جمال خاشقجی کو ترکی کے شہر استنبول میں سعودی قونصل خانے میں سعودی ولیعہد محمد بن سملان کے حکم پر قتل کردیا گیا تھا۔ صحافی خاشقجی کے بہیمانہ قتل اور یمن پر سعودی عرب کی بربریت کی وجہ سے سعودی عرب کو عالمی سطح پر ذلت اور رسوائی کا سامنا ہے۔

News Code 1886517

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 13 =