سعودی ولیعہد کا سعودی شہزادوں کے ساتھ فریب/ اجلاس کی دعوت دیکر ہوٹل میں قید کردیا

سعودی عرب میں شہزادوں اور وزرا ء کی گرفتاری کے معاملے پر مغربی میڈیا نے اندرونی کہانی سامنے لانے کا دعویٰ کرتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی عرب کے ڈکٹیٹرولیعہد محمد بن سلمان نے اہم سعودی شہزادوں کو اجلاس میں شرکت کا فریب دیکر فائیو اسٹار ہوٹل ریٹز کارلٹن میں قید کردیا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے مغربی ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ سعودی عرب میں شہزادوں اور وزرا ء کی گرفتاری کے معاملے پر مغربی میڈیا نے اندرونی کہانی سامنے لانے کا دعویٰ کرتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی عرب کے ڈکٹیٹرولیعہد  محمد بن سلمان نے اہم سعودی شہزادوں کو اجلاس میں شرکت کا فریب دیکر فائیو اسٹار ہوٹل ریٹز کارلٹن میں قید کردیا۔ اطلاعات کے مطابق ریاض کے فائیو اسٹار ہوٹل ریٹز کارلٹن نے 4 نومبر کو اپنے مہمانوں کو خط لکھا، جس میں کہا گیا تھا کہ مقامی حکام کی جانب سے غیر متوقع بکنگ کرائی گئی ہے، حالات نارمل ہونے تک مہمانوں کو ٹہرایا نہیں جاسکے گا۔ ذرائع کے مطابق ہوٹل کی جانب سے خط ملنے والے افراد کو حالات کی نازکت کا احساس ہو گیا تھا کیونکہ ہوٹل انتظامیہ نے پہلے ہی صفائی مہم شروع کررکھی تھی، یوں چند گھنٹوں بعد ہی اہم شخصیات کو دھر لیا گیا۔ مغربی میڈیا کے دعویٰ کے مطابق بعض شہزادوں اور دیگر افراد کو اجلاس اور میٹنگ کا کہہ کر اور دیگر کو گھروں سے حراست میں لیا گیا، شہزادہ متعب ریاض میں فارم ہاوس میں تھے، انہیں ولی عہد سے میٹنگ کا کہہ کر بلایا گیا، گھر والوں کو صرف ایک مختصر کال کرنے کی اجازت دی گئی۔ مغربی ذرائع کے مطابق زیادہ تر سیاسی اور بزنس شخصیات کی گرفتاری ریاض اور جدہ سے ہوئی، گرفتار افراد کو مختلف مقامات سے جہازوں اور گاڑیوں میں لا کر عارضی جیل ( ریاض کے فائیواسٹار ہوٹل ) میں قید کردیا گیا، زیر حراست افراد کو اب فون کی اجازت نہیں ہے اور ہوٹل میں کوئی شخص رفت و آمد  نہیں کرسکتا۔عرب ذرائع کے مطابق سعودی عرب کے ڈکٹیٹر ولیعہد محمد بن سلمان امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے اشارے پر اپنے م}خالفین کو راستے سے ہٹا کر بادشاہت تک پہنچنا چاہتے ہیں۔

News Code 1876613

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 6 =