عمان کے وزیر خارجہ کی شام کے بارے میں ایران کے مؤقف کی حمایت

مہر نیوز/ 21 اپریل / 2014 ء :عمان کے وزیر خارجہ نے شام کے بارے میں ایران کے مؤقف کی حمایت کی اور ایران اور سعودی عرب کے درمیان موجود اختلافات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک کو کسی ثالثی کی ضرورت نہیں ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق عمان کے وزیر خارجہ یوسف بن علوی نے اخبار الحیات  کے ساتھ گفتگو میں شام کے بارے میں ایران کے مؤقف کی حمایت کی ہے اور ایران اور سعودی عرب کے درمیان موجود اختلافات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ دونوں ممالک کو کسی ثالثی کی ضرورت نہیں ہے۔ عمان کے وزیر خارجہ نے کہا کہ شام میں جاری لڑائی داخلی لڑائی ہے جس میں دیگر ممالک کے دہشت گرد بھی حصہ لے رہے ہیں جن میں چچنیا اور عرب ممالک کے دہشت گرد بھی موجود ہیں۔ عمان کے وزیر خارجہ نے تہران اور مسقط کے روابط کو دوستانہ اور دیرینہ قراردیتے ہوئے کہا کہ ایران اور عمان کے درمیان اس وقت مضبوط اور مستحکم روابط ہیں۔ بن علوی نے سعودی عرب اور ایران کے درمیان اختلافات کو بنیادی اختلاف قراردیتے ہوئے کہا کہ دونوں ممالک کو کسی ثالثی کی ضرورت نہیں ہے لیکن اگر ضرورت ہوئی تو عمان دونوں ممالک کے درمیان ثالثی کے لئے آمادہ ہے۔ یوسف بن علوی نے کہا کہ ان کا ملک اخوان المسلمین کو سرکاری طور پر تسلیم نہیں کرتا ، کیونکہ اخوان المسملین کے بارے میں ہمارے پاس زيادہ اطلاعات بھی نہیں ہیں لیکن ہماری رفتار ان کے ساتھ ایک عام شہری کی طرح ہے انھوں نے کہا کہ السیسی مصری شہری ہیں انھیں عوام کی حمایت حاصل ہے اور صدارتی امیدوار بننے کا حق ہے۔

News Code 1835301

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 3 =