ہم اپنا دفاع كرنے كي بھر پور صلاحيت ركھتے ہيں // ايران پر حملے كا نقصان امريكہ كے لئے كہيں زيادہ ہے

سيد محمد خاتمي نے القاعدہ كي ايران كو دي جانے والي دھمكي كے بارے ميں كہا ايران نے دہشت گرد گروہوں منجملہ القاعدہ كے ساتھ بہت بڑا مقابلہ كيا ہے انھوں نے كہا كہ ميري حكومت كے دوران ايسے پروگرام بنائے گئے ہيں جن سے سياسي ، اقتصادي ، فوجي اور ثقافتي ميدانوں ميں احتمالي حملوں كا ڈٹ كر مقابلہ كيا جاسكتا ہے اميد ہے كہ كوئي حملہ ہي نہ ہو ليكن اگر ہوتا ہے تو ان منصوبوں پر عمل كيا جائے گا

مہر خبررساں ايجنسي كے مطابق صدر سيد محمد خاتمي نے نامہ نگاروں سے گفتگو كرتے ہوئے كہا كہ ايران اپنا دفاع كرنے كي بھر پور صلاحيت ركھتا ہے وہ اپنے پر امن ايٹمي پروگرام سے ہرگز دست بردار نہيں ہوگا ايٹمي ٹيكنالوجي كا حصول ايرني عوام كا حق ہے اور ايراني حكومت عوام كے حقوق كي حفاظت كرنے كي پابند ہے انھوں نے كہا كہ ہمارا ايٹمي پروگرام بالكل پر امن مقاصد كے لئے ہے اور بين الاقوامي ايٹمي ايجنسي نے بار ہا اس بات كي تائيد كي ہے صدر نےكہا كہ ايران ايٹمي معاملے كے سلسلے ميں تين يورپي ممالك كے ساتھ اپنے مذاكرات جاري ركھے گا اور يورينيم كي افزودگي في الحال شروع نہيں كي جائے گي انھوں نے كہا كہ اگر يورپ كي تجويز ميں يورينيم كي افزودگي متوقف كرنے كي بات كي گئي تو پھر يورپ والوں كو يقين كرلينا چاہيے كہ ان كي تجويز حتمي طور پرمسترد كردي جائے گي اور يہ بات ان سے پہلے بھي كہي جاچكي ہے سيد محمد خاتمي نے القاعدہ كي ايران كو دي جانے والي دھمكي كے بارے ميں كہا ايران نے دہشت گرد گروہوں منجملہ القاعدہ كے ساتھ بہت بڑا مقابلہ كيا ہے انھوں نے كہا كہ ميري حكومت كے دوران ايسے پروگرام بنائے گئے ہيں جن سے سياسي ، اقتصادي ، فوجي اور ثقافتي ميدانوں ميں احتمالي حملوں كا ڈٹ كر مقابلہ كيا جاسكتا ہے اميد ہے كہ كوئي حملہ ہي نہ ہو ليكن اگر ہوتا ہے تو ان منصوبوں پر عمل كيا جائے گا

News Code 211814

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 8 =