ہم ايران سےگيس پائپ لائن بچھانے كے منصوبے پر اكيلے ہي عمل درآمد كريں گے

ہندوستان كے موقف ميں يہ تبديلي امريكي دباؤ كے نتيجے ميں ہوئي ہے امريكہ نے كئي بار ہندوستان اور پاكستان سے كہا ہے كہ وہ گيس كےاس منصوبے كو ترك كرديں

مہر خبررساں ايجنسي نے فرانسيسي خبررساں ايجنسي كے حوالے سے نقل كيا ہے كہ پاكستان كي وزارت خارجہ كے ترجمان محمد نعيم خان نے ايك مختصر پريس كانفرنس ميں اعلان كيا ہے كہ ہم نئي دہلي كے اس منصوبے ميں تعاون كا استقبال كرتے ہيں ليكن اگر وہ اس سلسلے ميں تعاون نہ كر سكيں تو پاكستان بہر صورت اس منصوبے كو عملي جامہ پہنانے كي كوشش كرے گا نعيم خان نے كہا كہ يہ ايك ايسا منصوبہ ہے جس كے ذريعہ ہم اپني انرجي كي ضرورت كو پورا كرسكيں گے پاكستان كا يہ رد عمل ہندوستان كے وزير اعظم كے اس بيان كے بعد آيا ہے جس ميں انھوں نے كہا تھا كہ ايران سے ہند تك گيس پائپ لائن بچھانے كا راستہ خطر ناك ہے البتہ پاكستان نے اس راستے كي حفاظت كا مكمل يقين دلايا ہے  ليكن اس كے باوجود ہندوستان شك وترديد ميں ہے اور بعض مبصرين كا خيال ہے ہندوستان كے موقف ميں يہ تبديلي امريكي دباؤ كے نتيجے ميں ہوئي ہے امريكہ نے كئي بار ہندوستان اور پاكستان سے كہا ہے كہ وہ  گيس كےاس منصوبے كو ترك كرديں 

News Code 210751

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 8 =