بعض مذہبي مدارس ميں دہشت گردي كي تربيت دي جاتي ہے

افغانستان كے صدر حامد كرزائي نے بوطانوي وزير اعظم سے ملاقات كے بعد بي بي سے گفتگو كرتے ہوئے كہا كہ بعض مذہبي مدارس ميں دہشت گردي كي تعليم اور تربيت دي جاتي ہے

مہر خبررساں ايجنسي نے رپورٹ دي ہے كہ افغانستان كے صدر حامد كرزائي نےبي بي سي ٹي وي كے ساتھ گفتگو كرتے ہوئے كہا كہ القاعدہ نيٹ ورك اسامہ بن لادن كي سركردگي ميں سويت يونين كے ساتھ لڑائي كے لئے تيار كيا گيا تھا اور مغربي ممالك پر حملوں سے قبل القاعدہ نے ان ممالك سے بہت بڑي امداد حاصل كي ہے  كرزائي نے كہا كہ ايسے مراكز ہيں جو مدرسے اور اسلام كے نام پر كھل گئے ہيں اور وہاں دہشت گردي ، قتل و غارت اور باہمي منافرت پھيلانےكي تعليم اور تربيت دي جاتي ہے انھوں نے كہا كہ يہ مراكز جہاں كہيں ہوں ہميں انھيں بند كرنا چاہيے  حامد كرزائي آج كل برطانيہ كے دورے پر ہيں

News Code 208951

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 9 + 7 =