مسجد اقصیٰ میں 50 ہزار فلسطینیوں نے نماز ادا کی/ 152 نمازی زخمی، 400 گرفتار

اسرائیلی سیکیورٹی فورسز نے آج نماز فجر کے بعد مسجد اقصیٰ میں داخل ہوکر ہوائی فائرنگ اور آنسو گیس کی شیلنگ کی جس کے نتیجے میں 152 نمازی زخمی ہوگئے جبکہ اسرائيلی فورسز نے 400 فلسطینیوں کو گرفتار کرلیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے فلسطین الیوم کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ اسرائیلی سکیورٹی فورسز نے آج نماز فجر کے بعد  مسجد اقصیٰ میں داخل ہوکر ہوائی فائرنگ اور آنسو گیس کی شیلنگ کی جس کے نتیجے میں 152 نمازی زخمی ہوگئے جبکہ اسرائيلی فورسز نے 400 فلسطینیوں کو گرفتار کرلیا ہے۔ 

اطلاعات کے مطابق مسجد اقصیٰ میں نماز فجر کے بعد نمازیوں اور اسرائیلی سکیورٹی فورسز کے درمیان جھڑپ ہوئی، اسرائیلی سکیورٹی فورسز نے آنسو گیس کا بے دریغ استعمال کیا اور ہوائی فائرنگ بھی کی۔

اسرائیلی سکیورٹی فورسز نے نمازیوں کو زدوکوب کیا اور تشدد کا نشانہ بنایا۔ فلسطینی ہلال احمر کے مطابق اسرائیلی فورسز کی کارروائی میں 152 نمازی زخمی حالت میں لائے گئے جن میں درجن بھر کی حالت تشویشناک ہے۔

رمضان المبارک کے مہینے میں ہزاروں کی تعداد میں مسلمان عبادت کے لیے مسجد الاقصی میں نماز ادا کرتے ہیں۔ آج اسرائيلی سکیورٹی فورسز کی مسجد الاقصی سے پسپائی اور عقب نشینی کے بعد 50 ہزار کے قریب فلسطینیوں نے نماز جمعہ ادا کی۔  واضح رہے کہ گزشتہ 2 ہفتوں کے دوران اسرائیلی فورسز کی مختلف کارروائیوں میں 25 فلسطنی شہید ہوگئے ہیں۔

News Code 1910512

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 1 =