فلسطینی بچوں کا قاتل ترکی پہنچ گيا/ صدر اردوغان نے صہیونیوں کو بھائی قراردیدیا

ترکی کے اخبار ملی نے اسرائيلی صدر کے دورہ ترکی پر رد عمل ظاہر کرتے ہوئے لکھا ہے کہ فلسطینی بچوں کے قاتل ترکی پہنچ گئے ہیں۔ صدر اردوغان نے فلسطینی عوام اور بچوں کے قاتل صہیونیوں کو بھائی قراردیکر فلسطینیوں کے زخموں پر نمک چھڑک دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق ترکی کے ملی گزٹ اخبار " Milli Gazete "  نے اسرائيلی صدر اسحاق ہرٹوزک کے دورہ ترکی پر شدید رد عمل ظاہر کرتے ہوئے لکھا ہے کہ فلسطینی بچوں کے قاتل ترکی پہنچ گئے ہیں۔ صدر اردوغان نے فلسطینی عوام اور بچوں کے قاتل صہیونیوں کو بھائی قراردیکر فلسطینیوں کے زخموں پر نمک چھڑک دیا ہے۔ ترکی کا ملی گزٹ اخبار ترکی کی سعادت پارٹی کا اسلامی اخبار ہے۔ اس اخبار نے اسرائیلی صدر کے دورہ ترکی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے اپنے پہلے صفحہ کی سرخی  اس عنوان سے " قاتل انقرہ پہنچ گيا"  لگائی ہے۔ ترکی کے غیر سرکاری اداروں نے اسرائیلی صدر کے دورہ ترکی کی شدید مذمت کرتے ہوئے ترک صدر اردوغان کی طرف سے اسرائیلی صدر کی میزبانی کرنے کے اقدام کو ظالمانہ اور احمقانہ قراردیا ہے۔ ادھر ترک صدر نے صہیونیوں کو اپنا بھائی قراردیکر فلسطینیوں کے زخموں پر نمک چھڑک دیا ہے۔

دوسری طرف  فلسطینی تنظیموں حماس اور جہاد اسلامی نے بھی ترک صدر کے اس اقدام کی مذمت کی ہے۔ فلسطینیوں کا کہنا ہے کہ ترک صدر اردوغان کی پالیسی بھی نفاق پر مبنی ہےاور وہ مسلمانوں کو گمراہ کررہے ہیں۔ اردوغان حقیقت خطے میں اسرائیل کے حامی اور امریکی اسرائيلی ایجنڈے پر کام کررہےہیں۔

News Code 1910118

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • captcha