امریکہ نے بھارت میں حجاب پرپابندی کومذہبی آزادی کی خلاف ورزی قراردے دیا

بھارت کے تعلیمی اداروں میں حجاب پرپابندی کیخلاف دنیا میں آوازیں اٹھنے لگیں۔ امریکہ نے حجاب پرپابندی کومذہبی آزادی کی خلاف ورزی قراردے دیا۔

 مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق امریکہ کے مذہبی آزادی سے متعلق ادارے کے اعلی عہدیدار راشد حسین نے اپنے ایک ٹویٹ میں کہا ہے کہ بھارت کے تعلیمی اداروں میں حجاب پرپابندی مذہبی آزادی کی صریح خلاف ورزی ہے۔ راشد حسین نے اپنے بیان میں کہا کہ بھارتی ریاست کرناٹک میں تعلیمی اداروں میں حجاب پہننے پرپابندی مذہبی آزادی کی خلاف ورزی ہے۔

راشد حسین نے ٹویٹ میں مزید کہا کہ مذہبی آزادی میں لباس کے انتخاب کی آزادی بھی شامل ہے۔ بھارتی ریاست کرناٹک میں طالبات پرحجاب پہننے پرپابندی عائد کرنا مذہبی آزادی کی خلاف ورزی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ حجاب پرپابندی مذہبی آزادی پرکلنگ اورخواتین اورلڑکیوں کوزبردستی لباس کے انتخاب پرمجبورکرنے اورانہیں پیچھے دھکیلنے کے مترادف ہے۔

 کرناٹک کے تعلیمی اداروں میں باحجاب طالبات کے داخل ہونے پرپابندی کے بعد بھارت کے مختلف علاقوں میں مظاہرے کئے جارہے ہیں اور بھارتی حکومت کے مسلمانوں کے ساتھ متعصبانہ اور ناروا سلوک کو انسانی حقوق کی کھلی خلاف ورزی قراردیا جارہا ہے۔

News Code 1909828

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 8 =