افغانستان میں معاشی تباہی کے اثرات پڑوسی ممالک پر پڑیں گے

پاکستان کے وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ افغانستان کی معاشی تباہی کے اثرات پڑوسی ممالک پر پڑیں گے، افغانستان کے سلسلے میں ذرا سی غفلت پورے خطے کو متاثر کر سکتی ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان کے وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ افغانستان کی معاشی تباہی کے اثرات پڑوسی ممالک پر پڑیں گے، افغانستان کے سلسلے میں  ذرا سی غفلت پورے خطے کو متاثر کر سکتی ہے۔

اطلاعات کے مطابق افغانستان کی المناک انسانی صورتحال اور او آئی سی وزرائے خارجہ کونسل کے غیر معمولی اجلاس کے حوالے سے بیان دیتے ہوئے شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ افغانستان کی فی الفورمدد نہ کی گئی توانسانی بحران مزید بڑھ سکتا ہے، اور اس کی معاشی تباہی کے اثرات پڑوسی ممالک پر پڑیں گے، افغانستان کی صورتحال سے یورپی ممالک بخوبی آگاہ ہیں، یورپی یونین کواحساس ہوگیا کہ افغانستان میں حالات بگڑے تو نقصان ہوگا، نیٹو کمانڈرز بھی افغانستان کی صورتحال پر تشویش کا اظہار کر رہے ہیں، امریکی حکام کو بھی ماضی کی غلطیوں سے سبق سیکھناچاہیے، امریکہ میں بھی باتیں ہورہی ہیں کہ مستحکم افغانستان کیلئے کرداراداکرناچاہیے۔

شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ افغانستان میں امن خطے اور دنیا کے مفاد میں ہے، ذرا سی غفلت پورے خطے کو متاثر کر سکتی ہے۔ او آئی سی وزرائے خارجہ اجلاس افغانستان سے متعلق طلب کیا گیا ہے، افغانستان، او آئی سی کا بنیادی ممبر ہے انہیں تنہا نہیں چھوڑا جاسکتا، پاکستان افغانستان کی انسانی بنیادوں پر مدد کر رہا ہے۔

News Code 1909179

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 5 =