تہران میں برطانوی ناظم الامور ایرانی وزارت خارجہ میں طلب

اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ نے تہران میں برطانوی سفیر کی عدم موجودگي میں برطانوی ناظم الامور کو طلب کرکے برطانوی وزير خارجہ کے بے بنیاد الزام پر شدید رد عمل ظاہر کیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ نے تہران میں برطانوی سفیر کی عدم موجودگي میں برطانوی ناظم الامور کو طلب کرکے برطانوی وزير خارجہ کے بے بنیاد الزام پر شدید رد عمل ظاہر کیا ہے۔

ایرانی وزارت خارجہ کے یورپی امور کے ڈائریکٹر نے برطانوی ناظم الامور کے ساتھ ملاقات میں برطانوی وزیر خارجہ کے بے بنیاد اور جھوٹے بیان کی مذمت اور اس پر سخت افسوس کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ برطانوی وزیر خارجہ نے اپنے بے بنیاد الزامات میں کوئی ثبوت پیش نہیں کیا ، انھوں نے کہا کہ خلیج فارس خلیج امن ہے اور یہاں سبھی کشتیوں کے لئے آمد و رفت آزاد ہے۔ اگر غاصب صہیونی حکومت یا کسی دوسرے ملک  نے ایران کے قومی اور ملکی مفادات کے خلاف کوئي مہم جوئی کی تو اسے منہ توڑ جواب دیا جائےگا۔ایرانی وزارت خارجہ کے یورپی امور کے ڈائریکٹر نے برطانوی ناظم الامور  کو ایران کے تشویش کے بارے میں اپنی حکومت کو جلد آگاہ کرنے کی ہدایت کی۔

News Code 1907621

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 8 =