پاکستان اور چین کا افغان طالبان کو الٹی میٹم

پاکستان اور چین نے مشترکہ طور پر افغان طالبان کو دہشت گرد تنظیموں تحریک طالبان پاکستان اور ترکستان اسلامی تحریک سے تعلقات ختم کرنے کا الٹی میٹم دیدیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان اور چین نے مشترکہ طور پر افغان طالبان کو دہشت گرد تنظیموں تحریک طالبان پاکستان اور ترکستان اسلامی تحریک سے تعلقات ختم کرنے کا الٹی میٹم دیدیا ہے۔  پاکستان اور چین نے افغان طالبان پر واضح کیا ہے کہ انہیں نہ صرف ان دہشت گرد تنظیموں سے واضح طور پر تعلقات ختم کرنا ہوں گے بلکہ انھیں اپنے زیر کنٹرول علاقوں سے بھی نکالنا ہو گا۔

ذرائع کے مطابق افغان طالبان کو یہ پیغام 14 جولائی کو داسو میں دہشت گردانہ حملے کے تناظر میں پہنچایا گیا جس میں داسو پاور پراجیکٹ پر کام کرنے والے نو چینی ہلاک ہوئے تھے، اس واقعہ کو ابتدا میں ایک حادثہ قرار دیا گیا تھا۔

ذرائع کے مطابق پاکستان میں مذکورہ دہشتگرد حملے کی تحقیقات کرنے والی چینی ٹیم کو یہ شواہد ملے تھے کہ مشرقی ترکستان اسلامی تحریک نے یہ حملہ تحریک طالبان پاکستان کی مدد سے کیا تھا۔

ترکستان تحریک مغربی چین کی ایک ایغور شدت پسند تنظیم ہے ، جو مشرقی ترکستان کے نام سے ایک آزاد ریاست کے قیام کی خواہاں ہے۔ترکستان تحریک اور ٹی ٹی پی افغانستان میں موجود ہیں اور ان دونوں کو افغان طالبان کی بھی حمایت حاصل ہے ،اس لیے اسلام آباد اور بیجنگ نے یہ معاملہ طالبان کے ساتھ اٹھایا ہے۔

News Code 1907561

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 10 =