پاکستان، امریکہ کو فوجی اڈے نہیں دے گا

پاکستانی فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ پاکستان، امریکہ کو فوجی اڈے نہیں دے گا۔

مہر خبررساں ایجنسی نے جنگ کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستانی فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ پاکستان، امریکہ کو فوجی اڈے نہیں دے گا۔ انھوں نے پاکستانی پارلیمان کی قومی سلامتی کمیٹی اجلاس میں کہا کہ فوجی اڈے دینے کا سوال حکومت سے پوچھا جائے ‘مجھ سے اس بارے میں استفسار کیوں کیاجارہاہے جبکہ عسکری قیادت نے سیاسی قیادت کو بریفنگ میں بتایاکہ افغان تنازع کے باعث 5سے 7لاکھ افغان مہاجرین کی پاکستان آمد متوقع ہے ۔

افغان مہاجرین کو سرحد ی علاقوں تک محدود رکھا جائے گا، ذرائع کا کہنا ہے کہ ڈی جی آئی ایس آئی نے تقریبا 2گھنٹے شرکاکو قومی سلامتی کے مقاملے پر بریفنگ دی جبکہ اس موقع پر جنرل قمر جاوید باجوہ نے خطاب بھی کیا۔

پاکستان کے سیاسی قائدین نے عسکری قیادت سے افغانستان کی صورتحال پر کئی سوال کیے،سابق وزراء اعظم شاہد خاقان عباسی اور یوسف رضا گیلانی نے بھی اجلاس میں گفتگو کی ‘کچھ سیاسی قائدین نے آرمی چیف سے براہ راست سوالات کیے۔

 ذرائع کے مطابق قومی سلامتی کمیٹی کے اجلاس سے پہلے اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر اور آرمی چیف کے مابین ملاقات بھی ہوئی جسمیں ملکی سلامتی اور باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال ہوا،ذرائع کا یہ بھی کہناتھاکہ بریفنگ کے دوران عسکری قیادت نے بتایاکہ افغان مسئلے پر غیرجانبداررہناچاہتے ہیں۔ پاکستانی کی سیاسی اور عسکری قیادت نے ماضی میں ہونے والی غلطیوں کا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ وہ چین اور امریکہ کے معاملے میں کسی کیمپ میں نہیں ہیں۔

News Code 1907206

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 3 + 15 =