انڈونیشیا میں تمام اسپتال کورونا مریضوں سے بھر گئے

انڈونیشیا میں کورونا وائرس کی تازہ لہر نے بڑے پیمانے پر تباہی مچائی ہے جس کے باعث تمام اسپتال مریضوں سے بھر گئے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ  انڈونیشیا میں کورونا وائرس کی تازہ لہر نے بڑے پیمانے پر تباہی مچائی ہے جس کے باعث تمام اسپتال مریضوں سے بھر گئے اور صحت کا نظام مکمل طور فیل ہونے کے قریب پہنچ گیا ہےاطلاعات کے مطابق انڈونیشیا میں صرف گزشتہ ہفتے کورونا وائرس کے 20 لاکھ نئے کیسز سامنے آئے ہیں۔ اسپتالوں میں کورونا وارڈز مکمل طور پر بھر گئے ہیں جب کہ مریضوں کی بڑھتی ہوئی تعداد کے باعث طبی عملے میں کمی کا سامنا ہے۔

سب سے زیادہ خراب صورت حال جکارتہ میں ہے جہاں 75 فیصد بستر مکمل طور پر مریضوں سے بھر گئے ہیں اگر یہی صورت حال رہی تو آئندہ دو یا تین دن میں مریض اسپتال کی پارکنگ یا دروازے پر بستر خالی ہونے کا انتطار کرتے ہوئے زندگی کی جنگ لڑ رہے ہوں گے۔

انڈونیشیا میں بالغ افراد ہی نہیں بلکہ بچوں میں بھی کورونا تیزی سے پھیل رہا ہے، گزشتہ 6 ماہ کے دوران صرف ایک شہر میادان میں ایک ہزار 800 بچے متاثر ہوئے جن میں 14 ہلاک ہوگئے۔ انڈونیشیا میں کورونا وائرس کے دوران طبی عملے کے ایک ہزار ارکان لقمہ اجل بن گئے.

واضح رہے کہ انڈونیشیا میں کورونا سے متاثر ہونے والوں کی تعداد 2 لاکھ 72 ہزار ہوگئی ہے جب کہ اس مہلک وائرس سے ہونے والی ہلاکتوں کی تعداد 56 ہزار سے تجاوز کرگئی ہے ۔

News Code 1907134

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 5 + 3 =