فلسطینی بیت المقدس کی حمایت کے لئے پرعزم ہیں/نیتن یاہو کسی احمقانہ آپشن کی تلاش میں

حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصر اللہ نے المنار ٹی وی کی تاسیس کی مناسبت اور اپنی خیریت و عافیت کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ فلسطینی بیت المقدس کی حمایت کے لئے پرعزم ہیں اور اسرائیل کے وزیر اعظم اپنا اقتدار ختم ہونے کے پیش نظر کسی احمقانہ آپشن کی تلاش میں ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق حزب اللہ لبنان کے سربراہ سید حسن نصر اللہ نے المنار ٹی وی کی تاسیس کی مناسبت  اور اپنی خیریت و عافیت کا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ فلسطینی بیت المقدس کی حمایت کے لئے پرعزم ہیں اور اسرائیل کے وزیر اعظم اپنا اقتدار ختم ہونے کے پیش نظر کسی احمقانہ آپشن کی تلاش میں ہے۔

سید حسن نصر اللہ نے اپنی خيریت اور عافیت کے بارے میں نگرانی و تشویش پر اپنے حامیوں اور دوستوں کو اطمینان دلاتے ہوئے کہا کہ میں خیر و عافیت سے ہوں اور میں اپنے تمام دوستوں کو اطمینان دلاتا ہوں کہ میں صحت و سلامتی سے ہوں۔

حزب اللہ لبنان کے سربراہ نے کہا کہ میں آپ کے درمیان ہوں اور میری یہ تمنا ہے کہ میں آپ کے ہمراہ بیت المقدس میں نماز ادا کروں۔ انھوں نے کہا کہ ہمارے فلسطینی بھائی بیت المقدس کی آزادی کے سلسلے میں پرعزم ہیں۔ انھوں نے کہا کہ المنار کا اصلی ہدف فلسطینی تحریک اور انتفاضہ کی حمایت کرنا ہے اور اس سے ظآہر ہوتا ہے کہ المنار ٹی وی فلسطینی ٹی وی ہے ۔ المنار ٹی وی در حقیقت فلسطین اور یمن کے مظلوم مسلمانوں کی آواز ہے۔

سید حسن نصر اللہ نے اسرائیلی وزير اعظم کے اقتدار کے سورج کے ڈوبنے کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ اسرائیلی وزير اعظم بری طرح ناکام ہوچکے ہیں اور وہ اس وقت بحران سے خارج ہونے کے لئے کسی احمق آپشن کی تلاش میں ہے۔

News Code 1906852

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 8 + 2 =