بھارت کے ایک اسپتال میں  آکسیجن سلنڈر لیک ہونے سے کوروناو ائرس کے 24 مریض ہلاک

بھارت کے ذاکر حسین اسپتال میں آکسیجن سلنڈر لیک ہونے کی وجہ سے کورونا وارڈ کو آکسیجن گیس کی سپلائی متاثر ہوگئی جس کے نتیجے میں 24 مریض دم توڑ گئے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے بھارتی میڈیا کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ بھارت کے ذاکر حسین اسپتال میں آکسیجن سلنڈر لیک ہونے کی وجہ سے کورونا وارڈ کو آکسیجن گیس کی سپلائی متاثر ہوگئی جس کے نتیجے میں 24 مریض دم توڑ گئے۔  اطلاعات کے مطابق ریاست مہاراشٹر کے اہم شہر ناسک کے ذاکر حسین اسپتال میں آکسیجن گیس کے اسٹوریج روم میں لیکیج کی وجہ سے کورونا وارڈ کے مریضوں کو آکسیجن سپلائی متاثر ہونے سے 24 افراد ہلاک ہوگئے۔

آکسیجن گیس اسٹوریج میں لیکیج اُس وقت ہوئی جب وہاں گیس بھری جارہی تھی۔ دیکھتے ہی دیکھتے پورا اسٹوریج روم گیس سے بھر گیا۔ آکسیجن سپلائی کرنے والے ادارے کے اہلکار مکمل طور پر بے بس دکھائی دیئے۔

مہاراشٹر کے وزیراعلیٰ کے ترجمان کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ واقعے کی تحقیقات کے لیے اعلیٰ سطح کی کمیٹی تشکیل دیدی گئی ہے جب کہ لواحقین کو فی کس 5 لاکھ روپے امدادی رقم کا اعلان بھی کیا گیا ہے۔

آکسیجن گیس کی کم فراہمی کے باعث سب سے پہلی وینٹی لیٹر پر موجود 11 مریض ہلاک ہو گئے اس کے بعد مزید 13 مریض جو سلنڈر سے آکسیجن لے رہے تھے ہلاک ہوگئے۔

News Code 1906201

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 9 =