اٹلی نے روس کے 2 سفارتکاروں کو ملک بدر کردیا

اٹلی میں روس کے ایک شہری کو جاسوسی کے الزام میں گرفتار جب کہ دو روسی سفارتکاروں کو ملک سے بے دخل کردیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ اٹلی میں روس کے ایک شہری کو جاسوسی کے الزام میں گرفتار جب کہ دو روسی سفارتکاروں کو ملک سے بے دخل کردیا ہے۔

اطلاعات کے مطابق اٹلی کی پولیس نے ملکی سلامتی سے متعلق اہم دستاوزیز روسی فوج کے اہلکار کو رقم عوض دینے کے الزام میں اٹلی کی بحریہ کے ایک اہلکار اور روسی اہلکار کو گرفتار کرلیا ہے جب کہ اسی سلسلے میں روس کے دو سفارتکاروں کو ملک کو نکال دیا ہے۔

اٹلی پولیس کا کہنا ہے کہ نیوی کیپٹن والٹر بائیوٹ نے منگل کی شب ایک ملاقات میں روسی فوج کے اہلکار کو اہم ملکی دستاویز دی جس کے بدلے میں روسی اہلکار نے نیوی کے کیپٹن  کو 5 ہزار یورو دیئے۔

اس اہم دستاویز کے بارے میں بتایا گیا ہے کہ یہ اٹلی کو دی گئیں نیٹو کی فائلوں میں سے ایک ہے اور اب اس فائل کے روس تک پہنچنے سے مغربی فوجی اتحاد کے دیگر ممبرز کی سلامتی کے خدشات بڑھ گئے۔

اٹلی نے فوری طور پر روسی سفیر سیرگی رضوف کو طلب کیا اور دو روسی سفارت کاروں کے اس معاملے میں ملوث ہونے کے بارے میں بتایا۔ دونوں سفارت کاروں کو ملک بدر کردیا گیا۔

News Code 1905899

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 2 + 2 =