سعودی عرب میں طلاق کی شرح میں 7۔ 12  فیصد کا اضافہ

سعودی عرب میں ڈیڑھ لاکھ نکاح رجسٹر ہوئے جب کہ 57 ہزار طلاقیں بھی ہوگئی ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے عرب ذرائع کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ سعودی عرب میں ڈیڑھ لاکھ نکاح رجسٹر ہوئے جب کہ 57 ہزار طلاقیں بھی ہوگئی ہیں۔ اطلاعات کے مطابق سعودی عرب کے محکمہ شماریات نے رپورٹ جاری کی ہے جس میں بتایا گیا ہے کہ مملکت میں کورونا کے دوران نکاح کی شرح 8 اعشاریہ 9 فیصد بڑھی تاہم اس دوران طلاقوں کی شرح میں بھی 12 اعشاریہ 7 فیصد کا اضافہ ہوگیا۔

محکمہ شماریات کی رپورٹ کے مطابق 2020 میں سعودی عرب میں ڈیڑھ لاکھ نکاح نامے رجسٹر ہوئے، اور یہ شرح 2019 کے مقابلے میں 8.9 فیصد زیادہ ہے، جب کہ  2019 کے مقابلے میں 2020 کے دوران طلاقوں میں 12.7 فیصد کا اضافہ ہوا ہے، اور اس دوران 57 ہزار سے زیادہ طلاق نامے جاری ہوئے۔

محکمہ شماریات نے بتایا ہے کہ گزشتہ برس سب سے زیادہ شادیاں اگست کے مہینے میں ہوئیں، جب کہ نکاح سب سے زیادہ نکاح الجوف میں رجسٹررڈ ہوئے اور سب سے زیادہ طلاقیں بھی اسی ریجن میں ہوئی ہیں، حدود شمالیہ ریجن دوسرے، حائل تیسرے، ریاض چوتھے اور مکہ مکرمہ ریجن پانچویں نمبر پر رہا ہے۔ سعودی عرب کے موجودہ باشادہ اور ولیعہد دونوں سعودی عرب میں مغربی اور امریکی ثقافت کو فروغ دے رہے ہیں۔

News Code 1905867

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 9 + 1 =