یورپی ممالک کو مشترکہ ایٹمی معاہدے کی حفاظت کے لئے عملی قدم اٹھاناچاہیے

اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حسن روحانی نے یورپی ممالک کو مشترکہ ایٹمی معاہدے میں ان کے وعدوں کی یاد دلاتے ہوئے کہا ہے کہ یورپی ممالک کو مشترکہ ایٹمی معاہدے کی حفاظت کے لئے عملی قدم اٹھاناچاہیے۔

مہر خبررساں ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے صدر حسن روحانی نے یورپی ممالک کو مشترکہ ایٹمی معاہدے میں ان کے وعدوں کی یاد دلاتے ہوئے کہا ہے کہ یورپی ممالک کو مشترکہ ایٹمی معاہدے کی حفاظت کے لئے عملی قدم اٹھاناچاہیے۔

صدر حسن روحانی نے جرمن چانسلرانگلا مرکل  کے ساتھ ٹیلیفون پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ مشترکہ ایٹمی معاہدہ سکیورٹی کونسل کی منظور شدہ سند اور ایران اور 6 عالمی ممالک کی طولانی گفتگو کا نتیجہ ہے  جس کا دائرہ کار مشخص اور جو ناقابل تغییر ہے۔

صدر روحانی نے کہا کہ ایران کے خلاف اقتصادی پابندیوں کا جاری رہنا اور متعلقہ ممالک کی طرف سے مشترکہ ایٹمی معاہدے میں کئے گئے وعدوں پر عمل نہ کرنا اس معاہدے کی روح کے منافی ہے۔

صدر روحانی نے کہا کہ ایرانی پارلیمنٹ کے منظور شدہ قانون کے مطابق ایرانی حکومت نے مشترکہ ایٹمی معاہدے پر جو عمل کیا تھا اسے  بتدریج کم کردیا گیا، اگر فریق ثانی اب اپنے وعدوں کے مطابق عمل کرتا ہے تو ایران بھی اپنے وعدوں پر دوبارہ عمل شروع کردےگا۔

صدر حسن روحانی نے جرمنی اور ایران کے تاریخي تعلقات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایران دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کو فروغ دینے کا خواہاں ہے۔

اس ٹیلیفونی گفتگو میں جرمنی کی چانسلر انگلا مرکل نے مشترکہ ایٹمی معاہدے کی بقا کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہا کہ مشترکہ ایٹمی معاہدہ ایک بین الاقوامی معاہدہ ہے اور اس کی بقا اہم ہے۔ جرمن چانسلر نے دونوں ممالک کے درمیان باہمی تعلقات کے فروغ پر بھی تاکید کی۔

News Code 1905314

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 8 =