عالمی ادارہ صحت کا کورونا ویکسینز کے مؤثر ہونے سے متعلق تحفظات کا اظہار

عالمی ادارہ صحت کی جانب سے کورونا وائرس کی نئی اقسام سامنے آںے کے بعد اس کی روک تھام کے لیے بنائی گئی ویکسینز کے مؤثر ہونے سے متعلق تحفظات کا اظہار کردیا ہے۔

 مہر خبررساں ایجنسی نے رائٹرز کے حوالے سے نقل کیا ہےکہ عالمی ادارہ صحت کی جانب سے کورونا وائرس کی نئی اقسام سامنے آںے کے بعد اس کی روک تھام کے لیے بنائی گئی ویکسینز کے مؤثر ہونے سے متعلق تحفظات کا اظہار کردیا ہے۔ عالمی ادارہ صحت کے سربراہ ٹیڈرس ایڈہانوم غیبریسس نے پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کورونا کی نئی شکل سامنے آنے کے بعد جنوبی افریقہ میں ایسٹر زینکا ویکسین لگانے کا سلسلہ معطل کرنے کے بعد ہمیں اس بات کا اندازہ کرلینا چاہیے کہ  اس وائرس کے پھیلاؤ کو روکنے کے لیے ہمیں ہر طرح کے اقدامات کرنا ہوں گے۔ عالمی ادارۂ صحت کے سربراہ نے کہا ہے کہ کورونا وائرس کی نئی سامنے آنے والی شکلوں اور اقسام نے دستیاب ویکسینز کے مؤثر ہونے سے متعلق کئی شبہات اور تحفظات پیدا کردیئے ہیں۔

انہوں ںے اسے تشویش ناک خبر قرار دیا کہ کورونا وائرس کے لیے دست یاب ویکسینز میں سے کوئی بھی جنوبی افریقہ میں تشخیص ہونے والی کورونا وائرس کی تبدیل شدہ شکل کے خلاف پوری طرح مؤثر نہیں ہے۔

News Code 1905189

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 7 + 7 =