انڈونیشیا میں مٹی کا تودہ گرنےکےباعث چڑیا گھر سے دو شیرنیاں فرارہوگںیں

انڈونیشیا کے جزیرے بورنیو میں مٹی کا تودہ گرنے سے چڑیا گھر کے پنجرے کھل گئے جس میں سے دو شیرنیاں عملے کے رکن کو ہلاک کرکے فرار ہوگئیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے غیر ملکی ذرائع کے حوالے سے نقلکیا ہےکہ انڈونیشیا کے جزیرے بورنیو میں مٹی کا تودہ گرنے سے چڑیا گھر کے پنجرے کھل گئے جس میں سے دو شیرنیاں عملے کے رکن کو ہلاک کرکے فرار ہوگئیں۔

اطلاعات کے مطابق انڈونیشیا کے جزیرے میں مسلسل بارشوں کے باعث مٹی کا بڑا تودہ چڑیا گھر پر گر گیا جس کے نتیجے میں کئی جانور دب کر ہلاک ہوگئے اور دو شیرنیاں فرار ہوگئیں۔

محکمہ وائلڈ لائف تعاقب کرکے شیرنیوں کے قریب پہنچنے میں کامیاب ہو گئے، اہلکاروں نے بندوق کے ذریعے شیرنیوں کو نیند کی دوا دی، ایک شیرنی تو فوری طور پر بے ہوش ہوگئی تاہم دوسری شیرنی پر دوا کا اثر نہ ہوا۔

دوسری شیرنی مسلسل غرارتی رہی، بعد ازاں ایک اور انجیکشن کا اثر نہ ہونے پر اسے گولی مار کر ہلاک کردیا گیا تاکہ شہریوں کی جان کو محفوظ بنایا جا سکے۔ادھر جس پنجرے سے نکل کر دونوں شیرنیاں بھاگی تھیں وہاں قریب ہی چڑیا گھر کے ایک اہلکار کی لاش پڑی ہوئی تھی اور اس کے جسم پر جا بجا شیرنی کے دانتوں کے نشان تھے۔

News Code 1905167

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 9 + 7 =