جمعیت علماء اسلام (ف) نے پارٹی سے 4  اہم علماء کو نکال دیا

پاکستان جمعیت علماء اسلام " ف" نے پارٹی پالیسی سے انحراف کرنے والے 4 اہم علماء کی بنیادی رکنیت ختم کرتے ہوئے انہیں پارٹی سے نکال دیا ہے۔

مہر خبررساں ایجنسی نے ایکس پریس کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ پاکستان جمعیت علماء اسلام " ف" نے پارٹی پالیسی سے انحراف کرنے والے 4  اہم علماء کی بنیادی رکنیت ختم کرتے ہوئے انہیں پارٹی سے نکال دیا ہے۔ جمعیت علماء اسلام کی پارٹی ڈسپلن کی خلاف ورزی کرنے والے ارکان کے معاملے میں جمعیت علماء اسلام کی پارٹی ڈسپلنری کمیٹی نے پارٹی پالیسی سے انحراف کرنے والے 4 اراکین سے متعلق  فیصلہ کیا ہے اور کمیٹی نے مولانا محمد خان شیرانی، حافظ حسین احمد، مولانا گل نصیب خان اور مولانا شجاع الملک کی بنیادی رکنیت ختم کردی ہے۔

ترجمان جے یوآئی " ف " کے مطابق کمیٹی نے چاروں رہنماؤں کو پارٹی ڈسپلن کی خلاف ورزی کرنے پر رکنیت ختم کرکے پارٹی سے نکالا ہے، چاروں رہنماؤں کو نکالنے کا فیصلہ پارٹی ڈسپلنری کمیٹی نے کیا جبکہ ڈسپلنری کمیٹی کے سربراہ سائیں عبدالقیوم ہالیجوی کی ہدایت پر پارٹی جلد بنیادی رکنیت ختم کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کرے گی۔

ترجمان نے مزید کہا کہ کمیٹی ممبران آغا ایوب شاہ، مولانا عبدالواسع، مولانا عبدالحکیم اکبری سمیت دیگر نے متفقہ طور پر یہ فیصلہ کیا،چاروں رہنماؤں کے ساتھ جو پارٹی رہنما پارٹی نظم سے متعلق پروگراموں میں شرکت کرے گا ان کی بھی رکنیت ختم کردی جائے گی، ان چاروں میں سے کوئی رہنماء اپنے معاملے کی وضاحت کرتاہے اوراپنے کیے کی معافی مانگتاہے توکمیٹی اس کی روشنی میں  اپنافیصلہ کرنے میں بااختیارہوگی۔مولانا شیرانی نے حال ہی میں اسرائيل کے ساتھ تعلقات برقرار کرنے کی حمایت کی تھی۔

News Code 1904533

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 4 + 8 =