چین کا صدر ٹرمپ کے بعد امریکہ کے ساتھ تعلقات بہتر بنانے کے امکان کا اظہار

چین کے وزیر خارجہ وانگ ژی نے تنازعات کے حل کے لیے مذاکرات کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے امکان ظاہر کیا ہے کہ صدر ٹرمپ کے عہدہ چھوڑنے کے بعد امریکہ کے ساتھ تعلقات بہتر ہو سکتے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے شینہوا کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ چین کے وزیر خارجہ وانگ ژی نے تنازعات کے حل کے لیے مذاکرات کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے امکان ظاہر کیا ہے کہ صدر ٹرمپ کے عہدہ چھوڑنے کے بعد امریکہ کے ساتھ تعلقات بہتر ہو سکتے ہیں۔ اطلاعات کے مطابق چین کے وزیر خارجہ وانگ ژی نے چین اور امریکہ کی بزنس کونسل سے خطاب میں امریکہ کے ساتھ باہمی تعلقات میں بہتری کی امید ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ امریکہ میں صدرکی تبدیلی سے  چین کے ساتھ ایک بار پھر غیر جانبدارانہ تعلقات بحال ہو سکتے ہیں۔

وزیر خارجہ وانگ ژی نے مزید کہا کہ تنازعات کا حل مذاکرات میں ہے اور دونوں ممالک کے لیے یہ وقت بہترین ہے جب امریکی انتظامیہ میں بڑی تبدیلی آرہی ہے جس سے پالیسیوں میں نرمی اور غیر جانبداری کا امکان بڑھ گیا ہے۔

چین کے وزیر خارجہ کا یہ بیان اس وقت آیا ہے جب امریکی وزیر خارجہ نے ہانگ کانگ میں عوامی نمائندوں پر مقدمات بنانے کی مذمت کرتے ہوئے چینی حکام پر نئی پابندیوں کا عندیہ دیا ہے جس پر چینی وزارت خارجہ کی ترجمان نے شدید احتجاج بھی کیا ہے۔

واضح رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے دور میں چين اور امریکہ کے باہمی تعلقات انتہائی کشیدہ رہے ہیں ۔

News Code 1904272

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 1 + 1 =