ڈونلڈ ٹرمپ کے حامی بزنس مین نے اپنے 25 لاکھ ڈالرز طلب کرلئے

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے حامی بزنس مین نے الیکشن فراڈ ثابت نہ ہونے پر اپنے 25 لاکھ ڈالرز واپس مانگ لیے ہیں۔

مہر خبررساں ایجنسی نے سی این این کے حوالے سے نقل کیا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے حامی بزنس مین فریڈرک ایشل مین نے الیکشن فراڈ ثابت نہ ہونے پر اپنے 25 لاکھ ڈالرز واپس مانگ لیے ہیں۔

اطلاعات کے مطابق فریڈرک ایشل مین نے 2020ء کے صدارتی انتخابات میں دھاندلی ثابت کرنے کے لیے 25 لاکھ ڈالر کی خطیر رقم دی تھی۔

ٹرمپ کے حامی بزنس مین فریڈرک نے 25 لاکھ ڈالرز الیکشن ایتھکس گروپ کو دیئے تھے، جس کے خلاف انہوں نے مقدمہ درج کروادیا ہے۔

امریکی ذرائع کے مطابق ٹرمپ کے حامی بزنس مین نے یہ مقدمہ انتخابی دھاندلی بے نقاب کرنے میں ناکامی پر درج کروایا ہے۔

فریڈرک ایشل مین کے مطابق ڈونلڈ ٹرمپ کے حامی گروپ نے 2020ء الیکشن کے ووٹوں کی تصدیق اور قانونی کارروائی ترک کردی ہے۔

News Code 1904159

لیبلز

آپ کا تبصرہ

You are replying to: .
  • 6 + 4 =